نائب پولیش وزیر خارجہ نے اپنے ایرانی ہم منصب کیساتھ مذاکرات کو تعمیری قرار دیا

تہران، 22 جنوری، ارنا – پولینڈ کے نائب وزیر خارجہ جنہوں نے حال ہی میں ایران کا دورہ کیا تھا، نے تہران میں اپنے ہم منصب "سید عباس عراقچی" کے ساتھ ہونے والے مذاکرات کو تعمیری قرار دے دیا.

'ماچیج لینگ' نے اس حوالے سے فرانسیسی نیوز ایجنسی کو بتایا کہ انہوں نے اپنے ایرانی ہم منصب کے ساتھ پولینڈ اور امریکہ کی میزبانی میں آئندہ ہونے والی اینٹی ایران کانفرنس پر مذاکرات کئے.
انہوں نے مزید کہا کہ وارسا کانفرنس کسی ملاک کے خلاف نہیں ہے اور امید ہے کہ اس کانفرنس کے بعد اسلامی جمہوریہ ایران کے ساتھ تعلقات پر مثبت اثرات مرتب ہوں گے.یہ بات قابل ذکر ہے کہ پولینڈ کے نائب وزیرخارجہ نے ایسے وقت میں ایران کا دورہ کیا جب پولینڈ اور امریکہ کی جانب سے ایران مخالف اجلاس کی مشترکہ میزبانی کرنے سے متعلق حکومت ایران نے گزشتہ دنوں پولیش حکومت سے شدید احتجاج کیا تھا.
امریکہ مشرق وسطی میں امن و سلامتی کے نام نہاد موضوع پر ایران کے معاملے پر ایک بین الاقوامی کانفرنس کی میزبانی کرنے کا منصوبہ بنا رہا ہے. امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کے مطابق یہ کانفرنس آئندہ ماہ 13 اور 14 فروری کو پولینڈ میں کرائی جائے گی.
سید عباس عراقچی نے اپنے پولیش ہم منصب پر یہ بات واضح کردی کہ مشرق وسطی کے بحرانوں کی اصل جڑ ناجائز صہیونی ریاست ہے، جس کی جابرانہ اور ظالمانہ پالیسی کی وجہ سے یہ خطہ شدید مشکلات سے دوچار ہے.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@