نوش آباد، ایران میں واقع دنیا کا سب سے حیرت انگیز زیر زمین شہر

تہران، 20 جنوری، ارنا – 'نوش آباد' وسطی ایران اور کاشان کے علاقے میں واقع ایک تاریخی زیر زمین شہر ہے جو ایران اور دنیا کے اہم اور حیرت انگیز زیرزمین شہروں میں جانا جاتا ہے.

نوش آباد کا زیر زمین شہر کاشان کے علاقے سے 10 کلومیٹر پر واقع ہے. یہ زیر زمین ساسانی سلطنت کے بادشاہ 'انوشیروان ' کا دارالخلافہ تھا جس کی بنیاد 1500 سے 1800 سال پہلے رکھی گئی تھی.
نوش آباد کا زیر زمین شہر ایک پیچیدہ فن تعمیر پر مبنی ہے، یہاں طویل اور تنگ ہال بنے ہوئے ہیں جہاں چھوٹے چھوٹے کمروں کی تعمیر کی گئی ہے.
پرانے دور میں عوام کو جنگوں اور دشمنوں سے تحفظ فراہم کرنے کے لئے اس زیر زمین شہر کا استعمال کیا جاتا ہے جو وسیع رقبے پر پھیلا ہوا ہے.
کہا جاتا ہے منگلوں کی یلغار کے دوران نوش آباد زیر زمین شہر میں عوام کی حفاظت کی گئی.
اس شہر کا بہت بڑا حصہ سیلاب اور زمانے گزرنے کے ساتھ ساتھ تباہ ہوچکا ہے لیکن جس میں بہت سے مٹی برتنوں موجود ہیں جو ساسانیان کے دور حکومت سے متعلق اور قاجاری اور صفوی حکومتوں کے زمانے تک قابل استعمال تھے.
ںوش آباد کا سہ منزلہ زیر زمین شہر کی اونچائی مرکزی دروازے کے بغیر ایک عام انسانی قد(170- 180سنٹی میٹر) ہے اور اس کا مجموعی رقبہ چار مربع کلومیٹر پر محیط ہے.
اس زیر زمین شہر کے دیواروں پر روشنی کے لیے تیل کے بلبوں کی جگہ ہے اور بعض حصوں میں بیٹھنے کے لئے دیوار کے اندر بہت چھوٹے پلیٹ فارم موجود ہیں.
مجموعی طور پر یہ شہر بہت کمروں، کنووں اور سرنگوں پر مشتمل ہے اور آثار قدیمہ کے ماہرین کا کہنا ہے کہ اس شہر کی مٹی کی سختی کی وجہ سے اس کی کھدائی کے لیے ہیرا کا استعمال کر دیا گیا ہے.
تفصیلات کے مطابق، اس شہر کو 12 سال پہلے حادثاتی طور پر دریافت کیا گیا.
9410*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@