ایران خطے کے ایک دو ملکوں سے دوستانہ تعلقات کیلئے تیار ہے: صدر روحانی

گنبدکاووس، 14 جنوری، ارنا – صدر مملکت اسلامی جمہوریہ ایران نے کہا ہے کہ ایران کے پڑوسی ممالک کے ساتھ اچھے تعلقات قائم ہیں تاہم ایران خطے کے ایک دو ملکوں کے ساتھ بھی دوستانہ روابط کے قیام کے لئے آمادہ ہے.

یہ بات ڈاکٹر "حسن روحانی" نے پیر کے روز ایران کے شمالی شہر گلستان کے دورے کے موقع پر عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں نے کہا کہ ایران جلد ملکی ساختہ دو نئے سیٹلائٹس کو خلاء میں بھیجے گا. آئندہ ہفتوں میں ایرانی جامعہ امیرکبیر کے سائنسدانوں کی جانب سے تیار کئے گئے لانچر کے ذریعے دو نئے سیٹلائیٹ بشمول پیام سیٹلائیٹ کو خلاء میں بھیجے گا جو زمین سے 600 کلومیٹر کے فاصلے پر اپنے مدار میں گردش کرے گا.صدر روحانی نے ایرانی قوم کی بڑھتی ہوئی سائنس پر زور دیا اور کہا کہ تازہ ترین درجہ بندی کے مطابق، اسلامی جمہوریہ ایران جینیاتی میدان میں مشرق وسطی اور علاقے کی پہلی پوزیشن پر ہے جسے سائنسی، اقتصادی، تعلیمی اور فوجی کامیابیاں کی علامت ہے.
انہوں نے کہا کہ ہم دشمن کی سازشوں سے خوفزدہ نہیں اور تمام مشکلات پر قابو پانے کی صلاحیت رکھتے ہیں لہذا نہ امریکہ نہ ناجائز صہیونی ریاست اور نہ ان کے حامی ممالک ایرانی عوام کو گھٹنے ٹیکنے پر مجبور نہیں کر سکتے ہیں.
ایرانی صدر نے دشمنوں کے خلاف کھڑے ہونے پر زور دیا اور کہا کہ ہمارے دشمن ایرانی عوام کو خوراک، ادویات اور سامان سے محروم رکھنا چاہتے ہیں مگر ہم خطے کے ایک دو ملکوں کے بغیر تمام عالمی دوست، پڑوسی اور خلیج فارس کے جنوبی ممالک کے ساتھ اچھے تعلقات قائک رکھتے ہیں.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@