ایران میں ایکو ٹورازم اور روائتی سیاحت پر ایک جھلک

سمنان، 12 جنوری، ارنا - ایران میں ماحولیاتی سیاحت جسے Ecotourism کہا جاتا ہے، کے لئے مختلف علاقوں میں اور مخصوص انداز میں روائتی طرز پر رہائش گاہوں کی تعمیر کی گئی ہے جسے سیاح اپنے سیاحتی سفر میں استعمال کر کے اپنی سیاحت سے لطف اندوز ہوں.

ایران کے مختلف صوبوں ماحولیاتی سیاحت کے دوران مختلف پکوان اور مقامی کھانوں کا مزہ چھکانے کے ساتھ مقامی لوگوں کے ساتھ ان کی مقامی زبان میں گپ شپ لگانے کا بھی الگ مزہ ہے.
ایکو ٹورازم، سیاحت کی دنیا کی ایک منفرد نوعیت ہے جسے ایران میں فروغ مل رہا ہے اور یہ ایسی سیاحت ہے جس میں تقریبا غیرمنقسم قدرتی علاقوں کا دورہ کرنا شامل ہے اور لوگ رش بھری جگہوں اور ہوٹلوں کے بجائے دور دراز گاؤں کا رُخ کرتے ہیں تا کہ کچھ دیر کے لئے روزمرہ زندگی سے الگ ہوکر آرام دہ اور پرسکوں مقامات میں آرام کریں.
در اصل روایتی اور دیہی زندگی اور فطرت کی شناخت کے حوالے سے سیاحت اور ماحولیاتی سیاحت کی رہائش گاہوں کو فروغ دینے کے ذریعے ایران کے دیہی علاقوں کی ثقافتی اور تاریخی خصوصیات کو روشناس کرایا جاسکتا ہے.
ایرانی گاؤں کے گھروں، دکانوں اور گلی کوچوں کی خاص ساخت و تعمیر، قدرتی مناظر، ہزاروں سال کی عمر میں آثار قدیمہ، پرانی کاریز، دلکش دریاؤں اور اعلی معیار کی رزعی مصنوعات کی پیداوار، یہ سب ماحولیاتی سیاحت کی رہائش گاہوں کو ایک نمایان اور خاص سیاحتی مقام میں تبدیل کر دیا ہے۔
ایرانی ماہرین کا کہنا ہے کہ ماحولیاتی سیاحت سے وابستہ افراد کی سہولیت کے لئے مخصوص رہائش گاہوں کی تعمیر، موجودہ حکومت کی ترجیح میں شامل ہے جس کی تعداد گزشتہ 4 سال کے دوران 20 سے 700 تک پہنچ گئی ہے جبکہ ایرانی صوبے سمنان میں 60 سے زائد ماحولیاتی سیاحت کی رہائش گاہیں تعمیر کی جاچکی ہیں.
چار موسموں کی سرزمین ایران کے خوبصورت اور دلکش قدرتی مناظر، ہر طرف ہرے بھرے اور گھنے جنگلات، ستاروں سے بھری صحرا کی رات، ملک کے جنوبی حصے میں خوبصورت جزائر اور شمال اور مرکز میں گرم پانی کا چشمہ یہ سب اس بات کی عکاسی کرتی ہے کہ سیاح تمام موسم اور مہینوں میں ایران کا رخ کرلیں تا کہ یہاں خوبصورتی اور دلکش نظاروں سے لطف اندوز ہوں.

**274*9467
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@