ایران کی عراق کو سالانہ 11 ارب ڈالر کی برآمدات

سنندج، 7 جنوری، ارنا – اسلامی جمہوریہ ایران عراق کو سالانہ 11 ارب ڈالر کی مصنوعات برآمد کرتا ہے اور اسی وجہ سے عراق ایرانی مصنوعات کی پہلی منزل ہے.

یہ بات ایران عراق شام ٹریڈ ڈویلپمنٹ فورم کے سربراہ "حسن دانایی فر" نے کردستان صوبے کے نجی اور سرکاری شعبوں کے درمیان مشترکہ اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے اسلامی جمہوریہ ایران کی جانب سے عراق کو نان آئل اور توانائی کی مصنوعات کی بڑھتی ہوئی برآمدات کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ایران نے گزشتہ سال کے دوران عراق کو 6.4 ارب ڈالر مصنوعات کی برآمدات کیں جبکہ رواں سال 35 فیصد اضافے کے ساتھ اس کی شرح 8.1 ارب ڈالر تک پہنچ جائے گی.
ایرانی عہدیدار نے کہا کہ گزشتہ 9 مہینوں کے دوران ایران کی برآمدات میں 40 فیصد اضافہ دیکھنے میں آیا ہے اور رواں سال کے آخر تک اس کی سطح میں 35 فیصد کا اضافہ ہوگا.
انہوں نے کہا کہ ایرانی علاقے شلمچہ، فکہ اور کرمانشاہ سے عراق کو 1200 میگاواٹ بجلی فراہم ہوتی ہے جبکہ ایرانی صوبے کردستان سے عراقی علاقے کردستان کو بجلی کی برآمدات پر بھی مذاکرات ہورہے ہیں.
انہوں نے مزید کہا کہ اس وقت عراق کو دو پاپ لائن کے ذریعہ 25 ملین میٹر کیوبک گیس برآمد کی جارہی ہے جبکہ رواں سال ایران سے عراق کو توانائی کی برآمدات کا حجم تین ارب اور 50 کروڑ ڈالر تک پہنچ گیا.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے.