افغانستان میں امریکہ کی جانب سے داعش کی منتقلی انتہائی خطرناک ہے: ایران

تہران، 27 دسمبر، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران نے کہا ہے کہ امریکہ نے کبھی بھی افغان عوام کی بھلائی کے لئے کام نہیں کیا بلکہ افغانستان میں داعش کے بچ جانے والے عناصر کی منتقلی امریکہ کا خطرناک اقدام ہے.

یہ بات ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری ایڈمیرل ''علی شمخانی'' نے دورہ کابل کے موقع پر سابق افغان صدر ''حامد کرزئی'' کے ساتھ ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے افغانستان میں امریکی اقدامات کو مشکوک قرار دیتے ہوئے کہا کہ امریکہ داعش گروہ کے بقایا دہشتگردوں کو افغانستان منتقل کررہا ہے جو انتہائی خطرناک اقدام ہے.
ایڈمیرل شمخانی نے دہشتگردی سے متعلق امریکہ کے دوہرے معیار کا ذکر کرتے ہوئے مزید کہا کہ خطے میں امریکی موجودگی بدامنی اور عدم استحکام کی اصل وجہ ہے.
انہوں نے کہا کہ امریکہ ہرگز افغان قوم کا خیرخواہ نہیں ہے بلکہ افغانستان میں امریکی فوج کی موجودگی سے یہاں عدم استحکام کو بدامنی پیدا ہوئی.
حامد کرزئی نے افغانستان کے لئے اسلامی جمہوریہ ایران کے مخلصانہ کردار اور افغان قوم کی مسلسل حمایت کو سراہتے ہوئے کہا کہ افغان قوم اور حکومت کو یقین ہے کہ ایران ماضی کی طرح امن عمل کی کامیابی کے لئے اپنا موثر کردار جاری رکھے گا.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@