مذاکرات اور نئے معاہدے سے متعلق امریکی حکام کے بیانات بے معنی ہیں: ایران

تہران، 12 دسمبر، ارنا- ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ ایران کے ساتھ مذاکرات اور نئے معاہدے سے متعلق امریکی حکام کے بیانات بے معنی ہیں کیونکہ آزمائے ہوئے کو دوبارہ آزمانے کی غلطی سے بچنا ہوگا۔

یہ بات "بہرام قاسمی" نے امریکی نائب وزیر خارجہ برائے بین الاقوامی سلامتی وعدم پھیلاؤ " کرسٹوفر فورڈ" کے حالیہ بیانات کے رد عمل میں کہی۔
ترجمان قاسمی نے کہا کہ انہوں نے بھی دوسرے امریکی حکام کی طرح اپنی خام خیالیوں کی بنا پر اظہار رائے کی ہے جبکہ اگر صرف ایک اور دفعہ اپنی باتوں پر نظر ڈالیں تو ان کو اپنی بے بنیاد اور تضادات سے بھری باتوں کا پتا چلے گا۔
انہوں نے کہا کہ امریکہ بین الاقوامی معاہدوں کی خلاف ورزی کرنے والا سب سے بڑا ملک ہے اور اس کیجانب سے سلامتی کونسل کی قرارداد نمبر 2231 کی خلاف وزری، امریکی شرانگیزی اور ہٹ دہرمی کا واضح مثال ہے۔
ترجمان دفتر خارجہ نے مزید کہا کہ امریکہ نے جوہری معاہدے سے غیرقانونی علیحدگی کے ساتھ سلامتی کونسل کی 2231 قرارداد کی پامالی کی ہے.
9467*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@