امریکہ نے ایران فوبیا کے ذریعے 800 ارب ڈالر کے ہتھیاروں کی فروخت کی: ایڈمیرل سیاری

تہران، 11 دسمبر، ارنا - ایرانی آرمی کے ڈپٹی کوآرڈینٹر نے کہا ہے کہ عالمی سامراج بشمول امریکہ نے ایران فوبیا کے حربے کے ذریعے اسلامی ممالک کے اثاثوں پر ڈاکا ڈال کر خطی ممالک کو 800 ارب ڈالر کے ہتھیاروں کی فروخت کی ہے.

ایڈمیرل ''حبیب اللہ سیاری'' نے منگل کے روز تہران میں ایک مقامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ امریکہ نے ایران فوبیا کا کھیل کھیلا تا کہ وہ اسلامی ممالک کے اثاثوں پر ڈاکا ڈال کر انھیں 800 ارب ڈالر کے ہتھیار فروخت کرسکے.
انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی انقلاب کی فتح کے بعد عالمی سامراج قوتوں نے بارہا ایران کو نقصان پہنچانے کی کوششیں کیں، سامراجی ممالک نے ایران پر دہشتگردی، 8 سالہ جنگ مسلط کردی اور اندرونی اختلافات پیدا کئے، ہم پر ثقافتی یلغار بھی کی گئی تا کہ ایران میں موجود اسلامی نظام کو مفلوج کیا جاسکے.
ایڈمیرل سیاری کا کہنا تھا کہ ایران اسلامی اصولوں کے مطابق خطے میں اپنا اثر و رسوخ بڑھا رہا ہے، ہمارا مقصدکسی ملک پر حاوی ہونا یا اس پر غلبہ نہیں اور نہ ہی ایسی سوچ رکھتے ہیں.
انہوں مزید کہا کہ دشمن ایرانی قوم کو معاشی اور ثقافتی جنگ میں جکڑ کر ملک کو عدم استحکام کا شکار کرنا چاہتا ہے اور اس کے علاوہ دشمن 'سافٹ وار' کے ذریعے انقلاب سے متعلق ہماری سوچ کو بدلنا چاہتا ہے.
سنیئر ایرانی کمانڈر نے کہا کہ قرآنی تعلیمات کی پیروری کرتے ہوئے دشمنوں کی شیطانی سازشوں بالخصوص پابندیوں کا مقابلہ کیا جاسکتا ہے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@