عراق میں ایران نہیں، امریکہ اور سعودیہ مداخلت کررہے ہیں: عراقی رکن پارلیمنٹ

بغداد، 10 دسمبر، ارنا - عراقی پارلیمنٹ کے اسنیئر رکن اور الفتح اتحاد کے سربراہ نے کہا ہے کہ عراق کے اندرونی معاملات میں اسلامی جمہوریہ ایران نہیں بلکہ امریکہ اور سعودی عرب مداخلت میں ملوث ہیں.

''ہادی العامری'' جن کا جھکاو عراق کی رضاکار فورس الحشد الشعبی کی طرف ہے، نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مزید کہا کہ عراقی حکومت کی تشکیل یا اندرونی معاملات میں ایرانی مداخلت کی افواہیں بے بنیاد ہیں.
انہوں نے کہا کہ عراق کے سیاسی معاملات میں ایران کی کوئی مداخلت نہیں جبکہ سعودی عرب اور امریکہ کی مداخلت واضح ہے گرنڈ پارلیمانی کمیشن کے قیام میں امریکی سعودی مداخلت واضح تھی.
ہادی العامری نے مزید کہا کہ ایران اس بات پر زور دیتا ہے کہ عراق میں مذہبی اتحاد بشمول شیعہ اتحاد کو تحفظ دینا چاہئے جس میں عراق کا فائدہ ہے تاہم اس مرحلے میں ہم نے ایرانی مطالبے سے مخالفت کا اعلان کیا اور کہا کہ اب عراق میں شیعہ سیاسی اتحاد کی ضرورت نہیں ہے.
انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران عراق میں مداخلت نہیں کررہا بلکہ وہ عراق کو مشاورت دینے کا کردار ادا کررہا ہے.
ہادی العامری نے سعودی عرب کی عراق پالیسی پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ایران سعودی تعلقات کی مکمل بحالی سعودی عرب کی باضابطہ معافی پر منحصر ہے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@