برطانیہ ایرانیوں کے ویزے جاری کرنے کی سہولتیں فراہم کرے: ایرانی اہلکار

تہران، 9 دسمبر، ارنا – ایران کے قومی ورثہ، دستکاری اور سیاحتی ادارے کے سربراہ نے کہا ہے کہ برطانیہ ایرانیوں کے ویزے جاری کرنے کی سہولتیں فراہم کرے.

یہ بات "علی اصغر مونسان" نے اتوار کے روز ایران میں تعینات برطانوی سفیر "راب مک کایر" کے ساتھ ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران اور برطانیہ کے درمیان دوطرفہ تعلقات میں مزید اضافہ ہوا ہے جو ہمیں امید ہے کہ اس بڑھتے ہوئے تعلقات کو جاری رکھیں گے.
مونسان نے کہا کہ دونوں ممالک کی شہریوں کے لئے ویزے جاری کرنے کی سہولیات کی فراہمی کے معاہدے پر دستخط کرنے کی ضرورت ہے کیونکہ ایرانیوں کا برطانیہ کے دورے سے مقصد اقتصادی اور ثقافتی سرگرمیاں ہیں.
انہوں نے مزید کہا کہ دونوں ممالک کو ایک باہمی معاہدے کے تحت ویزے کے مسائل کو حل کرنا چاہئیے کیونکہ اگر اس شعبے کی رکاوٹیں دور ہوئے تو اسلامی جمہوریہ ایران اور برطانیہ کے درمیان ثقافتی تعلقات بھی مزید فروغ مل جائیں گے.
ایرانی اہلکار نے دونوں ممالک کے درمیان ثقافتی اور سیاحتی شعبوں میں باہمی تعاون کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ دونوں ملکوں کے قومی میوزیم کے درمیان مشترکہ نمائش اور برطانیہ میں ایرانی دستکاری مصنوعات کی نمائش کا انعقاد دو طرفہ ثقافتی تعلقات کو بڑھ سکتے ہیں.
انہوں نے ایران کی سیکورٹی اور دلکش مناظر پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ بد قسمتی سے بعض ممالک سمیت امریکہ کی جانب سے بعض مسائل کی وجہ سے ہمارے ملک کے حوالے سے جھوٹی چہرہ پیش کیا جاتا ہے.
مونسان نے کہا کہ ایران کے تاریخی مقامات کی مرمت اور تعمیر نو کی ضرورت ہے جو نجی شعبے اس سلسلے میں سرگرم عمل ہیں.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@