ایران سے تجارت کا فروغ پاکستان کی اہم ترجیح قرار

اسلام آباد، 8 دسمبر، ارنا - وزیراعظم پاکستان کے مشیر برائے تجارت و صنعت نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے ساتھ تجارتی تعاون کا فروغ پاکستانی حکومت کی اہم ترجیح ہے.

''عبدالرزاق داود'' نے ہفتہ کے روز ارنا نیوز کے نمائندے کو خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے مزید کہا کہ پاکستان ہمسایہ ممالک بالخصوص ایران کے ساتھ تجارتی روابط بڑھانے کی خواہش مند ہے.
انہوں نے پاک ایران تجارتی تعلقات کو بڑھانے سے متعلق رکاوٹوں کے خاتمے پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ دنوں پاکستان میں تعینات ایرانی سفیر سے ملاقات اور اچھی گفتگو ہوئی جس میں معاشی مسائل، مواقع اور باہمی تجارت کو درپیش مشکلات پر تبادلہ خیال کیا گیا.
پاکستانی وزیراعظم کے مشیر نے مزید کہا کہ انہوں نے ایرانی سفیر کے ساتھ مشترکہ تجارتی تعلقات کو بڑھانے کے طریقوں پر بات چیت کی ہے. اور اس کے علاوہ بینکاری چینل، ایران سے بجلی و گیس کی درآمدات اور مصنوعات کے لین دین سے متعلق بھی گفتگو ہوئی.
انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ وجودہ پاکستانی حکومت کے دور میں پاک ایران تجارتی تعلقات کو غیرمعمولی سطح پر لے جائیں جو دونوں ملکوں کی قیادت نے باہمی تجارت کو 5 ارب ڈالر تک لے جانے کے لئے فیصلہ کیا تھا.
عبدالرزاق داود نے کہا کہ پاکستان یقینی طور پر ایران کے ساتھ تجارتی روابط کودرپی مشکلات کے حل کے لئے سنجیدہ ہے اور ہم چاہتے ہیں کہ دونوں ملکوں کے درمیان تجارت کو فروغ ملے.
انہوں پاک ایران بینکنگ مسائل سے متعلق کہا کہ اس حوالے سے بینک دولت پاکستان کے گورنر سے بات چیت ہوگی اور مخصوص نشست کا بھی انعقاد کیا جائے گا.
وزیراعظم پاکستان کے مشیر نے مزید کہا کہ پاک ایران معاشی اور تجارتی تعاون کا مستقبل روشن ہے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@