افغان مسئلے کا حل صرف سیاسی ہے: ایرانی اسپیکر

تہران، 8 دسمبر، ارنا - ایرانی اسپیکر نے اس بات پر زور دیا ہے کہ افغانستان میں مشکلات کو فوجی ذریعے سے نہیں بلکہ ان مسائل کا حل صرف سیاسی طریقوں سے ممکن ہے.

ان خیالات کا اظہار ''علی لاریجانی'' نے تہران میں افغان پارلیمنٹ کے اسپیکر ''عبدالرئوف ابراہیمی'' کے ساتھ ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کیا.
اس موقع پر انہوں نے ایران کی میزبانی میں 6 ملکی اسپیکرز کانفرنس میں افغانستان کی شرکت کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ افغان قوم نے حالیہ برسوں میں مختلف بحرانوں سے عبور کیا اور ہمیں امید ہے کہ مسئلہ افغانستان کا خوش اسلوبی سے حل ہو.
انہوں نے مزید کہا کہ اسپیکرز کانفرنس کے فورم سے خطے میں ممالک کے درمیان قربت میں اضافہ ہوگا.
علی لاریجانی نے کہا کہ افغانستان میں امریکی موجودگی لمبی ہوگئی ہے جس سے امریکی فوج تنگ ہے. دہشتگردی اور منشیات ایک سکے کے دو رخ ہیں لہذا ہمیں امید ہے کے اس جیسے مسائل کو سیاسی طریقوں سے حل کیا جائے.
انہوں نے مزید کہا کہ ایران اور افغانستان معاشی لحاظ سے ایک دوسرے سے جڑے ہیں لہذا تمام شعبوں میں بالخصوص انسداد منشیات کے حوالے سے دونوں ممالک کے تعاون کو مزید بڑھانا ہوگا.
افغان اسپیکر نے اس ملاقات میں کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران ہمیشہ مشکل حالات میں افغان قوم کے شانہ بشانہ کھڑا رہا ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ ایران اور افغانستان ایک دوسرے کے برادر اور ہمسایہ ممالک ہیں اور ہم بھی چاہتے ہیں کہ دوطرفہ تعلقات کو مزید فروغ ملے.
عبدالرئوف ابراہیمی نے اس امید کا اظہار کیا کہ دونوں ممالک کے درمیان پانی اور بینکاری کے مسائل کو جلد حل کیا جائے گا.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@