ایران اور پاکستان دہشتگردی کیخلاف تعاون کو بڑھائیں: لاریجانی

تہران، 8 دسمبر، ارنا - ایران کی اسلامی مجلس شوریٰ (پارلیمنٹ) کے اسپیکر نے انسداد دہشتگردی کے شعبے میں اسلامی جمہوریہ ایران اور پاکستان کے درمیان دوطرفہ تعاون کو مزید فروغ دینے پر زور دیا ہے.

یہ بات ''علی لاریجانی'' نے تہران میں اپنے پاکستانی ہم منصب ''اسد قیصر'' کے ساتھ ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہی.
یہ ملاقات میں ایران کی میزبانی میں منعقد ہونے والی دوسری اسپیکرز کانفرنس کے موقع پر ہوئی جس میں شرکت کے لئے پاکستان کی قومی اسمبلی کے اسپیکر ایک پارلیمانی وفد کے ہمراہ تہران کے دورے پر ہیں.
اس ملاقات میں ایرانی اسپیکر نے اسد قیصر کو پاکستانی پارلیمنٹ کے اسپیکر کا عہدہ سنبھالنے پر مبارکباد پیش کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کیا کہ دونوں ممالک کے درمیان پارلیمانی تعاون کو مزید فروغ ملے گا.
انہوں نے مزید کہا کہ ایران اور پاکستان برادر اور ہمسایہ ملک ہیں جن کے مستقبل ایک دوسرے سے جڑے ہوئے ہیں. پاکستان 6 ملکی اسپیکرز کانفرنس کی بنیاد رکھی جو نہایت اہم ہے لہذا اس کے مقاصد کے حصول کے لئے کوششوں کو جاری رکھنا ہوگا.
علی لاریجانی نے اس بات پر زور دیا کہ دہشتگردی کے خلاف اجتماعی تعاون سے ممالک کے درمیان اقتصادی تعاون کو وسعت ملے گی.
انہوں نے ایران اور پاکستان کے درمیان سیاحتی اور زیارتی ٹورازم کو فروغ دینے کا مطالبہ کیا اور کہا کہ باہمی تجارت میں اضافہ ناگزیر ہے اور اس کے علاوہ دونوں ممالک کو چاہئے کہ جن شعبوں میں ان کی اچھی صلاحتیں ہوں اس سے متعلق معاہدوں پر دستخط کئے جائیں.
علی لاریجانی نے مزید کہا کہ دہشتگردی کا مقصد علاقائی ممالک کو نقصان پہنچانا ہے لہذا اس لعنت کے خلاف مقابلہ کرنا ہوگا.
انہوں نے مغوی ایرانی بارڈر گارڈز سے متعلق کہا کہ ہمیں امید ہے کہ حکومت پاکستان کے تعاون سے دہشتگردوں کے ہاتھوں یرغمال بنائے جانے والے باقی کے 7 ایرانی اہلکاروں کو فوری طور پر بازیاب کرایا جائے گا.
اس موقع پر پاکستانی اسپیکر نے 6 ملکی اسپیکرز کانفرنس کی میزبانی پر حکومت اسلامی جمہوریہ ایران کا شکریہ ادا کرتے ہوئے چابہار میں حالیہ دہشتگرد حملے کی شدید مذمت کی.
اسد قیصر نے کہا کہ ایران اور پاکستان ایک دوسرے کے دوست، مسلمان اور ہمسایہ ملک ہیں اور ہمیں ایران کے ساتھ تعلقات پر فخر ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان خطے میں دہشتگردی کا مکمل خاتمہ چاہتا ہے اور ہمیں امید ہے کہ اسپیکرز کانفرنس کے ذریعے دہشتگردی کے خلاف مشترکہ تعاون کو فروغ ملے گا اور اس کے علاوہ علاقائی ممالک کے درمیان تجارت بھی بڑھی گی.
اسد قیصر نے اس موقع پر پاک ایران تجارتی روابط کو مزید بڑھانے پر بھی زور دیا.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@