ایران اپنے دفاعی پروگرام سے متعلق بے بنیاد خدشات کی پرواہ نہیں کرتا: قاسمی

تہران، 4 دسمبر، ارنا - ایرانی دفترخارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کبھی بھی اپنے دفاعی پروگرام سے متعلق بعض ممالک کی بے جا تشویش اور ان کے بے بنیاد خدشات کی پرواہ نہیں کرتا.

''بہرام قاسمی'' نے اپنے ایک بیان میں مزید کہا کہ ہم دوسروں کے بے جا خدشات کو دیکھ کر اپنے دفاعی پروگرام کو نہیں چلاتے.
انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی میزائل سرگرمیوں میں ایسا کوئی منصوبہ نہیں جس کا مقصد جوہری ہتھیار لے جانے والے میزائل بنانا ہو.
قاسمی نے بعض مغربی حکام کے حالیہ بیانات بالخصوص برطانیہ اور فرانس کے ایرانی میزائل پروگرام کے حوالے سے سلامتی کونسل میں اجلاس بلانے کے مطالبے پر اپنے ردعمل میں کہا کہ ہمیں اپنے مؤقف کو بار بار دہرانے کی ضرورت نہیں، ایران کے میزائل پروگرام کا مقصد ملکی دفاع کو مضبوط بنانا ہے اور یقینا ہم اس مقصد کے لئے بعض ممالک کی بے جا تشویش کو تسلیم نہیں کریں گے.
انہوں نے مزید کہا کہ ہم سمجھتے ہیں کہ ایران کے دفاعی پروگرام پر نام نہاد خدشات کا مقصد دنیا میں ایران فوبیا کو ہوا دینا ہے اور اس منصوبے پر بعض مخصوص ممالک کام کررہے ہیں.
بہرام قاسمی نے مغرب کے امتیاز سلوک پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ایران کے میزائل پروگرام سلامتی کونسل کی قرارداد 2231 کی خلاف ورزی نہیں تاہم بعض ممالک اس قرارداد کے نکات سے واقف ہوتے ہوئے غیرتعمیری رویہ اختیار کررہے ہیں جس کی ہم مذمت کرتے ہیں.
انہوں نے مزید کہا کہ افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ جو ممالک آج ایران کے پُرامن دفاعی پروگرام کے خلاف آواز بلند کررہے ہیں وہ خود اپنے ایک اتحادی کو کھربوں ڈالر کی عسکری خدمات فراہم کررہا ہے جس کی وجہ سے وہ کئی سال سے ایک ملک پر دن رات جارحیت کررہا ہے جس کے نتیجے میں ہزاروں نہتے افراد بشمول خواتین اور بچے ہوچکے ہیں.
9467*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@