امریکہ، ایران کے علاقائی اور عالمی تجارتی تعلقات کو ختم نہیں کرسکتا: صدر روحانی

تہران، 4 دسمبر، ارنا – صدر مملکت اسلامی جمہوریہ ایران نے کہا ہے کہ امریکہ، ایران کے خطی ممالک اور دنیا کے ساتھ تجارتی تعلقات کو ختم نہیں کرسکتا.

ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر "حسن روحانی" نے منگل کے روز سمنان صوبے کے دورے کے موقع پر عوام کے عظیم اجتماع میں خطاب کرتے ہوئے کیا.
روحانی نے امریکہ کو مخاطب کرتے ہوئے مزید کہا کہ ایران اپنا تیل فروخت کرتا ہے اور آئندہ بھی کرتا رہے گا لہذا اگر امریکہ کسی دن ایرانی تیل کی فروخت کو روکنا چاہے تو وہ جان لے کہ خلیج فارس سے کسی کا تیل نہیں گزر سکے گا.
انہوں نے ایران کے عالمی تعلقات کو متاثر کرنے کی امریکی کوششوں کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ آج اسلامی جمہوریہ ایران کے اپنے پڑوسی ممالک عراق، ترکی، جمہوریہ آذربائیجان، روس، قازقستان، ترکمانستان، افغانستان، پاکستان، عمان، قطر اور کویت کے ساتھ گہرے اور دوستانہ تعلقات قائم ہیں اور رہیں گے بھی، لہذا امریکہ ایران اور علاقائی ممالک کے درمیان تعلقات کو متاثر نہیں کرسکتا.
ایرانی صدر نے کہا کہ امریکہ جان لے ایرانی عوام اپنے عالمی اور علاقائی ثقافتی، اقتصادی اور پالیسی تعلقات کو تحفظ فراہم کرنا جانتے ہیں اور ہم اپنے اسلامی اور عالمی تعلقات کو فروغ دیں گے.
روحانی نے مزید کہا کہ امریکہ نہ صرف ایران اور یورپ کے درمیان فاصلہ پیدا کرنا چاہتا ہے بلکہ وہ ایران اور چین، بھارت اور دوسرے ہمسایہ ممالک کے درمیان علیحدگی پیدا کرکے ایران فوبیا کو ہوا دینا چاہتا ہے.
انہوں نے کہا کہ نہ تو ہم اپنے ہمسایوں کے دشمن ہیں اور نہ ہی امریکہ ایران، پڑوسی اور اسلامی ممالک کے درمیان کوئی تفرقہ ڈال سکتا ہے.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@