ارنا نیوز ایجنسی کے ڈائریکٹرز، بیورو چیف اور چیف ایڈیٹرز کا مشترکہ اجلاس

تہران، 3 دسمبر، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران کے قومی خبررساں ادارے (IRNA) کی جانب سے دو روزہ اجلاس کا انعقاد کیا گیا ہے جس میں ارنا کے سنیئر ڈائیکٹرز، صوبائی دفاتر کے سربراہ اور چیف ایڈیٹرز شریک ہیں.

تفصیلات کے مطابق، ایران کے صدارتی چیف آف اسٹاف ڈاکٹر ''محمود واعظی'' اور صدر انفارمیشن کونسل کے علاوہ سربراہ ارنا نیوز ایجنسی ''سید ضیاء ہاشمی'' شریک ہیں.
اس اجلاس کا عنوان اندرونی اور بیرونی معاملات پر ریاستی پالیسی اور اطلاعات کی بہتر فراہمی ہے.
ایرانی صدر کے معاون خصوصی برائے میڈیا حسام الدین آشنا ارنا نیوز ایجنسی کے مشترکہ اجلاس کی اختتامی تقریب میں شرکت اور خطاب کریں گے.
ایرانی ترجمان دفترخارجہ بہرام قاسمی، اعلی قومی سلامتی کونسل، محکمہ ثقافت اور اسلامی گائیڈنس کے اعلی حکام اور مختلف صحافتی اداروں کے عہدیدار بھی اس اجلاس میں شریک ہیں.
اس اجلاس کے موقع پر ارنا نیوز ایجنسی کے شہید صحافیوں اور کارکنوں کو خراج عقیدت پیش کیا جائے گا.
6 دسمبر 2005 کو تہران میں ایک فوجی طیارہ C130 اڑان بھرتے ہی فنی خرابی کی وجہ سے گر گیا جس میں صحافیوں سمیت 94 عملے سوار تھے. صحافی ایران کے علاقے چابہار میں ایک تقریب کی کوریج کے لئے جارہے تھے کہ بدقسمتی سے ان کے جہاز کو حادثہ پیش آیا.
اس واقعے میں ارنا نیوز ایجنسی کے صحافی سپہدار ساجدی اور فوٹوگرافر مہدی میرافضلی سمیت متعدد رپورٹرز، ٹی وی اینکرز اور صحافی شہید ہوئے.
ارنا نیوز ایجنسی کو 10 اگست 1934 کو قائم کیا گیا جس کا پرانا نام پارس ایجنسی تھا اور اس کا مقصد ایران کے اندرونی حالات، خطے اور علاقائی حالات سے متعلق خبروں کی اشاعت کرنا تھا.
28 دسمبر 1981 میں ایرانی پارلیمنٹ کی منظوری کے بعد اس ادارے کے نام کو اسلامی جمہوریہ نیوز ایجنسی (IRNA) رکھا گیا.
آج ارنا کو قائم ہوئے 84 سالہ کا عرصہ بیت چکا ہے اور اسے ایران کا سب سے پرانا خبررساں ادارہ مانا جاتا ہے. ارنا کے 54 صوبائی اور ضلعی دفاتر کے علاوہ 22 ممالک میں بیورو آفس قائم ہیں.
ارنا نیوز ایجنسی سے منسلک 5 اخبارات شائع ہوتے ہیں جن میں فارسی زبان اخبار ایران، کھیلوں کا اخبار، عربی زبان اخبار الوفاق، انگریزی اخبار ایران ڈیلی اور بصیرت سے محروم افراد کے لئے مخصوص اخبار ایران سپید شامل ہیں.
ارنا سے منسلک میڈیا کالج بھی قائم ہے جسے صحافیوں اور میڈیا سے وابستہ افراد کی تربیت کے لئے ایک اہم ادارہ مانا جاتا ہے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@