تہران ریاض کیلئے کوئی خطرہ نہیں ہے: ایرانی سفارتکار

تہران، 2 دسمبر، ارنا – ایرانی وزرات خارجہ کے اہلکار برائے سعودی امور نے کہا ہے کہ تہران ریاض کے لئے کوئی خطرہ نہیں اور اسلامی جمہوریہ ایران اپنے مفادات کے مطابق سعودی عرب کو غیرمستحکم نہیں چاہتا ہے.

یہ بات "حسین درویش وند" نے اتوار کے روز ایران اور سعودی عرب کے درمیان تعلقات کے مستقبل سے متعلقہ نشست میں خطاب کرتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران اور سعودی عرب اسلامی دنیا اور علاقے کے دو بڑے طاقتور ممالک ہیں جو خطے میں تعمیری کردار ادا کر رہے ہیں.
درویش وند نے کہا کہ ایران اور سعودی عرب ایک دوسرے سے لاچار نہیں ہوسکتے ہیں لہذا ان کے درمیان مثبت اور تعمیری تعلقات قائم ہونا چاہیئے یا تنازعاتی تعلقات.
انہوں نے دونوں ممالک کے درمیان مشترکہ سرحدوں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ اسلامی دنیا ہمارے مشترک محور ہے اسی لئے مشترکہ موضوعات پر مل کر کام کرسکتے ہیں.
ایرانی سفارتکار نے کہا کہ سابق ایرانی صدر مرحوم آیت اللہ ہاشمی رفسنجانی کے دوران دونوں ممالک کے درمیان ایک مذہبی کونسل کا قیام ان باہمی تعاون میں سے ایک تھا.
انہوں نے دونوں ممالک کے درمیان تیل کے اہم مسئلے کے حوالے سے کہا کہ اسلامی انقلاب کی کامیابی کے بعد اسلامی جمہوریہ ایران اور سعودی عرب تیل کے موضوع پر مقابلہ کر رہے ہیں.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@