پاک ایران گیس منصبوے کی تکمیل کیلئے سنجیدہ ہیں: پاکستان

اسلام آباد، 1 دسمبر، ارنا - پاکستان کے وفاقی وزیر تیل نے اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کی قیادت میں موجودہ پاکستانی حکومت ایران کے ساتھ مشترکہ گیس پائپ لائن منصوبے کو مکمل کرنے کی خواہاں ہے.

یہ بات ''غلام سرور خان'' نے اسلام آباد میں حکمران جماعت تحریک انصاف کی 100 دن کی کارکردگی کے حوالے سے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے پاک ایران گیس منصوبے سے متعلق تازہ ترین صورتحال پر تبصرہ کرتے ہوئے مزید کہا کہ پاکستان اس منصوبے کو پایہ تکمیل تک پہنچائے گا.
اس موقع پر پاکستانی وزیر تیل نے ارنا نیوز ایجنسی کے نمائندے کے اس سوال پر کہ اسلامی جمہوریہ ایران نئی پاکستانی انتظامیہ سے عملی اقدامات اٹھانے کا مطالبہ کررہا ہے جبکہ تہران نے بھی اس سے پہلے تمام اقدامات اٹھائے ہیں، کہا کہ انھیں ایرانی ہم منصب سے خط موصول ہوا ہے جس میں ان کو دورہ ایران کی دعوت دی گئی ہے تاہم اس دورے سے متعلق کوئی تاریخ حتمی نہیں ہوئی مگر میں ایران جانے کے لئے دلچسپی رکھتا ہوں.
انہوں نے ایران مخالف امریکی پابندیوں کا حوالہ دیتے ہوئے مزید کہا کہ پاکستان اپنے مفادات کے تحت فیصلہ کرے گا.
پاکستانی وزیر تیل نے کہا کہ حال ہی میں ایران سے ماہرین کی ایک ٹیم پاکستان آئی تھی جس کا مقصد گیس پائپ لائن پر ازسرنو مذاکرات کا آغاز کرنا تھا. پاکستان چاہتا ہے کہ ملک کو درپیش توانائی کی ضروریات کو پورا کرنے کے لئے اس منصوبے کو مکمل کرے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@