امریکی ایران مخالف پابندیوں کیساتھ عراق کی ایک بار پھر مخالفت

بغداد، 27 اکتوبر، ارنا – عراق کے نئے وزیر اعظم نے ایک بار پھر کسی ایک طرفہ پابندیوں اور معیشتی محاصرہ خاص طور پر ایران کے خلاف امریکہ کی ایک طرفہ پابندیوں کیساتھ اپنے ملک کی مخالفت کا اعلان کردیا.

یہ بات 'عادل عبدالمہدی' نے گزشتہ روز عراق کی نئی کابینہ کے پہلے اجلاس کے اختتام کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے کہا کہ ایران مخالف امریکی پابندیوں کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ عراق ایران کے خلاف امریکہ کے پابندی نظام کا حصہ نہ ہو گا.

عادل عبدالمہدی نے مزید بتایا کہ بائیکاٹ اور پابندیوں نے عراق کو بہت نقصان پہنچایاہے تو پابندیوں کے ساتھ ہماری مخالفت سنجیدہ ہیں.

انہوں نے مزید بتایا کہ عراق، دوسرےممالک کے خلاف کسی بھی حملے اور جارحیت کی اجازت نہ دینے کےعلاوہ ان جارحانہ اقدامات میں کوئی ملک کا ساتھ نہیں دے گا.

عراقی وزیر اعظم نے کہا کہ عراق، اپنے مفادات اور خودمختاری کی حفاظت کرنا اور دوسرے ممالک کے اندرونی معاملات میں مداخلت نہیں کرنا چاہتا ہے اور پابندیوں کے حوالے سے ہمارا موقف اسی اساس پر ہے.

9410*274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@