کینیڈا دوطرفہ تعلقات کی بحالی پر سنجیدہ نہیں: ایرانی ترجمان

تہران، 22 اکتوبر، ارنا - ایرانی دفترخارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران، کینیڈا کے ساتھ تعلقات کی بحالی کے لئے آمادہ ہے تاہم کینیڈین حکومت اس حوالے سے سنجیدہ نظر نہیں آتی.

'بہرام قاسمی' نے ایران اور کینیڈا کے تعلقات کے حوالے سے میڈیا کو بتایا کہ ایران، کینیڈا کے ساتھ سی بھی طرح کے مذاکرات کے لئے آمادہ ہے جس کا اصل مقصد کینیڈا میں موجود ایرانی شہریوں کے لئے قانونی اور قونصلر سہولتوں کو فراہم کرنا ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ ایران، باہمی تعلقات میں پیشرفت لانے پر آمادہ ہے تاہم ایسا لگ رہا ہے کہ کینیڈین حکومت اس حوالے سے سنجیدہ نہیں ہے.
ترجمان نے کہا کہ دنیا میں ممالک کے درمیان تعلقات دوطرفہ مسئلہ ہے، لیکن ایران کے ساتھ یکطرفہ طور پر تعلقات کو منقطع کرنا بالخصوص کینیڈین پارلیمنٹ کی جانب سے ایران کے ساتھ مذاکرات کے خلاف بل کی منظور ہماری سمجھ سے بالاتر ہت.
انہوں نے مزید کہا کہ کینیڈا میں لبرل حکومت کے بر سر اقتدار آنے کے بعد دونوں ممالک کے درمیان تہران اور کسی تیسرے ملک میں متعدد بار مذاکرات ہوئے اور اس دوران ایران نے دونوں ملکوں کے شہریوں کے لئے قونصلر تعاون کی بحالی پر آمادگی کا اظہار کیا ہے تاہم کینیڈا اپنے اندرونی مسائل کی وجہ سے سنجیدہ نظر نہیں آتا.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@