ایران کا پاکستان سے مغوی اہلکاروں کی جلد بازیابی اور ملوث عناصر کی گرفتاری کا مطالبہ

تہران، 20 اکتوبر، ارنا - ایرانی مسلح افواج کے سربراہ نے اپنے پاکستانی ہم منصب کے ساتھ ایک ٹیلی فونک رابطے میں گزشتہ دنوں پاک ایران سرحد پر ایرانی محافظوں کے اغوا میں ملوث دہشتگرد عناصر کی جلد گرفتاری کا مطالبہ کیا ہے.

میجر جنرل 'محمد باقری' نے ہفتہ کے روز پاکستان کے آرمی چیف جنرل 'قمر جاوید باجوہ' سے رابطہ کیا.
جنرل باقری نے مزید کہا کہ ایران اور پاکستان کی مسلح افواج کے درمیان موجودہ معاہدوں کے مطابق، پاکستانی فورسز مغوی ایرانی اہلکاروں کی جلد بازیابی اور اغوا کاروں کے خلاف فوری ایکشن اور ان کی گرفتاری کو یقینی بنائیں.
اس موقع پر پاکستانی سپہ سالار نے ایرانی بارڈر گارڈز کے اغوا پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس واقعے کے بعد پاکستانی فورسز اغوا کاروں کا سراغ لگانے کے لئے حرکت میں آگئیں.
جنرل باجوہ نے اس امید کا اظہار کیا ہے کہ پاکستان کے عسکری اور سلامتی اداروں کے اقدامات سے مغوی ایرانی محافظوں کی بازیابی اور اس واقعے میں ملوث دہشتگردوں کی جلد گرفتاری ممکن ہوگی.
ایرانی مسلح افواج کے سربراہ نے ایران کے ساتھ مشترکہ سرحدی علاقوں میں پاکستان کی جانب سے نفری کو مزید بڑھانے پر زور دیا جس سے سرحدی خطے میں امن قائم رہے گا اور دہشتگردوں کی نقل و حرکت کو روکا جاسکے گا.
15 اکتوبر کو پاک ایران سرحد کے قریب دہشتگردوں ںے انقلاب مخالف عناصر کے ساتھ مل کر ایران کے 14 سرحدی اہلکاروں کو اغوا کر لیا. ان اہلکاروں کو علی الصبح لولکدان کے سرحدی علاقے سے ایک دہشتگرد گروہ نے اغوا کیا ہے.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@