ایران کی موثر سفارتکاری نے FATF سے متعلق امریکی سازش کو ناکام بنادیا: ترجمان

تہران، 20 اکتوبر، ارنا - ایرانی دفترخارجہ کے ترجمان نے فائننشل ایکشن ٹاسک فورس (FATF) کی جانب سے اسلامی جمہوریہ ایران سے متعلق مالیاتی اور بینکاری امور تنبیہی اقدامات کی ایک بار پھر معطلی کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران کی جارحانہ سفارتکاری نے امریکہ، صہیونیوں اور سعودیوں کی سازش کو ناکام بنادیا.

'بہرام قاسمی' نے اپنے ایک بیان میں مزید کہا کہ ایف اے ٹی ایف کے حالیہ اجلاس میں ایران سے متعلق تبیہی اقدامات کو مزید چار مہینے کے لئے معطل کردیا گیا جس کا ہم خیرمقدم کرتے ہیں.
انہوں نے کہا کہ امریکہ فائننشل ایکشن ٹاسک فورس کا عبوری صدر تھا جس کا وہ غلط فائدہ اٹھا کر ناجائز صہیونی ریاست اور سعودیوں کی مدد سے ایران کو بلیک لسٹ میں ڈالنا چاہتا تھا مگر ایران کی موثر سفارتکاری نے اس منصوبے کو بے اثر کردیا.
ترجمان نے ایف اے ٹی ایف کے حالیہ فیصلے کا خیرمقدم کرنے کے ساتھ حالیہ اجلاس کے اختتامی بیان کے چند نکات پر تنقید کی.
انہوں نے فائننشل ایکشن ٹاسک فورس پر زور دیا کہ مخصوص ایجنڈے اور سیاسی مفادات سے بالاتر ہو کر تکنیکی رپورٹس کی بنیاد پر اقدامات کرے.
بہرام قاسمی نے حالیہ اجلاس میں ایران کو پھر سے بلیک لسٹ میں ڈالنے کی امریکی کوششوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے مزید کہا کہ ایسے اقدامات وائٹ ہاؤس کے انتہاپسندانہ رویے کو ظاہر کرتے ہیں.
انہوں نے کہا کہ امریکی اقدامات سے یہ بات ظاہر ہوئی ہے کہ وہ عالمی برادری کے لئے قابل بھروسہ ملک نہیں کیونکہ وہ یکطرفہ اقدامات سے دنیا میں چند فریقی کوششوں کو تباہ کرنے پر اترا ہوا ہے.
ایرانی ترجمان نے فائننشل ایکشن ٹاسک فورس کے ممبران پر زور دیا کہ وہ آئندہ فیصلوں سے متعلق ایسے اقدامات پر کڑی نظر رکھیں.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@