ایران اور بھارت چابہار منصوبے پر جلد کام شروع کرنے کیلئے آمادہ

نئی دہلی، 15 اکتوبر، ارنا - بھارت کے انگریزی اخبار ٹائمز آف انڈیا کے مطابق، اسلامی جمہوریہ ایران اور بھارت چابہار منصوبے پر جلد کام شروع کریں گے.

ٹائمز آف انڈیا نے اپنی رپورٹ میں مزید کہا کہ چار نومبر کو ایران مخالف نئی امریکی پابندیوں کے آغاز سے پہلے ایران اور بھارت نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ چابہار بندرگاہ کے منصوبے کے تحت پہلے ہاربر کی تعمیر کو عملی جامہ پہنایا جائے.
ایک ایرانی وفد نے گزشتہ ہفتے بھارت کا دورہ کیا تھا اور اس موقع پر بھارتی حکام کے ساتھ ملاقاتوں میں نئی امریکی پابندیوں کے آغاز سے پہلے چابہار بندرگاہ کے ایک فیز کی تعمیر پر فیصلہ کیا گیا.
بھارتی حکام کے مطابق، امریکی پابندیوں کی وجہ سے چابہار منصوبے کی تکمیل تعطل کا شکار ہوا تاہم دونوں ممالک اپنے بینکوں کے ذریعے چابہار منصوبے کے لئے مناسب ادائیگی کے طریقہ کار کو متعارف کرنے کے لئے کوشش کررہے ہیں.
یاد رہے کہ امریکہ نے 6 اگست کو اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف بعض پابندیاں عائد کیں اور کہا کہ 4 نومبر کو بھی نئی پابندیوں کا آغاز ہوگا.
چابہار بندرگاہ بحیرہ عمان میں واقع ہے جس کے ذریعے بھارت کو افغانستان تک رسائی میں آسانی ہوگی.
بھارتی حکومت نے اس بندرگاہ کی توسیع کے منصوبے کے لئے 50 کروڑ ڈالر اور سڑکی اور ریلوے لائن کی تعمیر کے لئے 1.5 ارب ڈالر سرمایہ کاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@