چار نومبر کے بعد ایران کے حالات بہتر ہوں گے: سنیئر ایرانی تجزیہ کار

تہران، 13 اکتوبر، ارنا - جامعہ تہران کے پولیٹیکل سائنسز کے پروفیسر اور نامور سیاسی تجزیہ کار کا کہنا ہے کہ چار نومبر جو ایران کے خلاف نئی امریکی پابندیاں عائد ہونے کا دن ہے، کے بعد ایران کے حالات بہتر ہوں گے.

ڈاکٹر صادق زیبا کلام نے مزید کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے جو بہت پہلے سے ہی کہہ رہا تھا کہ 4 نومبر کو نئی پابندیاں عائد کرے گا، پہلے سے ہی یہ پابندیاں لگائی ہیں لہذا 4 نومبر کو کوئی خاص واقعہ پیش نہیں آنے والا.

انہوں نے بتایا کہ 4 نومبر کے بعد کوئی خاص واقعہ پیش نہیں آئے گا اس دن کے بعد ملک میں امن و سکون ہو گا اور یہ آرام اور سکون بہت سے واقعات کو حل کرے گا.

انہوں نے بتایا کہ فی الحال ٹرمپ نے تمام ایران مخالف پابندیوں کو عائد کی ہے اور ان کے ایما پر دنیا کے مختلف ممالک نے ایرانی تیل کی خریداری کو کم کردیا ہے اور امریکہ اور ایران کے درمیان روابط میں کوئی خاص واقعہ پیش نہیں آیا ہے.

سنیئر ایرانی تجزیہ کار نے کہا کہ 4نومبر کی پابندیاں کا موضوع صرف معاشرے پر نفسیاتی اثر پڑا ہے.

تفصیلات کے مطابق، امریکہ 4 نومبر کو ایران مخالف عائد پابندیوں کی نئی دور کا آغاز کرے گا اسی لیے دنیا کے بہت ممالک کو ایرانی تیل کی خریداری کو روکنا چاہتا ہے لیکن بہت سے ممالک ایرانی تیل کی خریداری پر پابندیوں سے معافی کے لیے کوشش کر رہے ہیں.

9410*274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@