یورپی یونین ایران کیساتھ تجارتی تعلقات کی مضبوطی کیلئے پرعزم

تہران، 9 اکتوبر، ارنا – اسلامی جمہوریہ ایران میں تعینات ڈنمارک کے سفیر نے جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ ڈنمارک اور دوسرے یورپی ممالک کی ایران کے ساتھ تجارتی تعلقات کی مزید مضبوطی کے لئے کوشش کر رہے ہیں.

یہ بات "دنی انان" نے پیر کے روز ایران کے عیسائی فرقے آشوری سے تعلق رکھنے والے بعض اراکین پارلیمنٹ کے ساتھ الگ الگ ملاقاتیں کرتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں نے کہا کہ ایران اور ڈنمارک کے درمیان اعلی سطح پر تعلیمی اور تجارتی دوطرفہ تعلقات دونوں ممالک کے مثبت تعلقات کی علامت ہے.
انان نے کہا کہ تمام ادیان کے پیروکاروں کے لئے اسلامی جمہوریہ ایران ایک محفوظ ملک ہے جو ڈنمارک اس موضوع پر توجہ مرکوز کر رہا ہے.
ایرانی غیرمسلم رکن پارلیمنٹ "کارن خانلری" نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران، شام اور لبنان میں تمام ادیان کے پیروکار آسانی سے زندگی بسر کرتے ہیں جس کی اہم وجہ ان ممالک میں اہل بیت علیہ السلام کی سوچ کا پھیلاو ہے.
خانلری نے کہا کہ اسلامی انقلاب کی کامیابی کے بعد مختلف مذاہب کے درمیان گفتگو قائم ہوگیا جو اسلامی جمہوریہ ایران اس سلسلے میں سرگرم عمل ہے.
انہوں نے کہا کہ جب شام اور عراق میں عیسائی شہری داعش دہشتگرد اور النصرہ فرنٹ کا شکار ہوگئی صرف ایران نے ان کے لئے انسانی بنیادوں پر امداد بھیجا.
9393**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@