عالمی عدالت انصاف کا فیصلہ امریکہ کی مزید تنہائی کا باعث بن گیا: ایرانی سفیر

تہران، 5 اکتوبر، ارنا – دی ہیگ میں تعینات ایرانی سفیر نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے حق میں عالمی عدالت انصاف کا فیصلہ امریکہ کی مزید تنہائی کا باعث بن گیا۔

یہ بات " علیرضا جہانگیری" نے گزشتہ روز اپنے ٹوئٹر پیج میں کہی۔
اس موقع پر انہوں نے امریکہ کی خلاف ورزی پر ایران کے مقدمے کے حوالے سے بین الاقوامی عدالت انصاف کے فیصلے کو ایک بڑی کامیابی قرار دے دیا۔
جہانگیری نے کہا کہ عالمی عدالت انصاف نے امریکہ سے اپنے وعدوں پر قائم رہنے کا مطالبہ کیا کیونکہ جوہری معاہدے سے ان کی علیحدگی ایرانی قوم کے خلاف پابندیوں کی نئی تجدید کا باعث بن گئی ہے۔
انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ امریکہ کو جوہری معاہدے پر واپس آنا اور عالمی معاہدوں پر قائم رہنا چاہئیے۔
یاد رہے کہ ایرانی وزیر خارجہ نے 16 جولائی کو کہا تھا کہ امریکہ نے 1955 کے مشترکہ معاہدے کی خلاف ورزی کرنے کے بعد ایران نے فیصلہ کیا کہ امریکہ کے خلاف عالمی عدالت انصاف میں درخواست دائر کرے گا.
ایران اور امریکہ کے درمیان 1955 میں طے پانے والے معاہدے کے تحت دونوں ممالک معاشی اور قونصلر امور پر اقدامات کی عدم خلاف ورزی پر پابند رہیں گے جبکہ امریکہ نے جوہری معاہدے سے غیرقانونی علیحدگی کے بعد ایران کے خلاف نئی پابندیاں عائد کردیں.
9393**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@