اہواز دہشت گردانہ حملے میں ملوث افراد کا سخت سزا دیں گے: آیت اللہ خامنہ ای

تہران،24ستمبر،ارنا- ایرانی سپریم لیڈر نے ایران کے جنوبی صوبے کے شہر اہواز میں نہتے لوگوں پر دہشت گردانہ حملے کو بزدلانہ قرار دے کر فرمایا کہ اس حملے میں ملوث افراد کا سخت سزا دیں گے.

ان خیالات کا اظہار رہبر معظم انقلاب اسلامی حضرت آیت اللہ خامنہ ای نے انڈونیشیا میں ایشین گیمز میں میڈل حاصل کرنے اور حصہ لینے والے ایرانی کھیل قافلہ میں شریک کھلاڑیوں اور کھیل حکام کی ملاقات میں فرمایا.
انہوں نے فرمایا کہ اس بزدلانہ حملے کا ذمہ دار وہ دہشتگرد عناصر ہیں جو عراق اور شام میں گرفتار ہوکر امریکیوں کے ہاتھ سے نجات پاتے ہیں اور سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات سے معاوضہ لیتے ہیں.رہبر معظم انقلاب اسلامی نے ایرانی کھلاڑیوں کی شاندار کارکردگی کا حوالہ دیتے ہوئے فرمایا کہ اصلی میڈل آپ ہیں کیونکہ موثر،ایماندار،سنجیدہ،ذہین اور محنت کش نوجوان ہر کسی قوم اور ملک کا قیمتی سرمایہ اور ترقی کی وجہ ہیں.
انہوں نے عالمی مقابلوں میں میڈل حاصل کرنے نوجوانوں کی بہترین کارگردگی کو آزاد قوموں کے لئے خرسندی کا ایک پیغام سمجھایا جو عالمی استکباری طاقتوں کو شدید غصے میں لاتی ہے.
آیت اللہ خامنہ ای نے مزید فرمایا کہ ایرانی قوم کی ہر کسی فتح،استکباری طاقتوں کو غصے میں لاتی ہے؛ اسی لئے آپ کی جیت در اصل ایرانی قوم کی جیت اور ہمارے دشموں کی بڑی ہار ہے. ہمیں آپ پر فخر کرتے ہیں اور ہمارے آپ سے ان شکریے کے پیغامات سچے اور حقیقی احساسات کا مظہر ہیں.
انہوں نے ناجائز صہیونی کھلاڑیوں کے ساتھ ایرانی کھلاڑیوں کے مقابلہ نہ کرنے کی وجہ پر روشنی ڈالتے ہوئے فرمایا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے انقلاب اسلامی کی ابتدا ہی سے غاصب صہیونی اور نسل پرست جنوبی افریقہ ریاستوں کو سرکاری طور پر تسلیم نہیں کیا؛البتہ نسل پرست جنوبی افریقہ کی حکومت کا تختہ الٹ گیا اور غاصب صہیونی ریاست کا تختہ بھی الٹ جائے گی.٭9467
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئےIrnaUrdu@