پاک ایران پارلیمانی تعلقات کو مزید فروغ دیا جائے گا: پاکستانی اسپیکر

اسلام آباد، 3 ستمبر، ارنا - پاکستانی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے کہا ہے کہ ایران اور پاکستان کے درمیان تعلقات کے نئے دور میں دونوں پارلیمنٹ کے درمیان باہمی تعاون کو مزید فروغ ملے گا.

یہ بات قومی اسمبلی کے اسپیکر 'اسد قیصر' نے ارنا نیوز ایجنسی کے نمائندے کے ساتھ خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے مزید کہا کہ پاک ایران حکام کی موثر حکمت عملی بالخصوص دونوں ملکوں کے اسپیکروں کی کاوشوں سے دوطرفہ تعلقات بشمول پارلیمانی شعبے میں تعاون کو ماضی سے زیادہ فروغ دیں گے.
اسد قیصر نے نئی پاکستانی انتظامیہ کے دور میں پاک ایران تعلقات کی پیشرفت پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ دوطرفہ تعلقات کے فروغ دینے میں ایران اور پاکستان کی پارلیمنٹ کو اہم کردار حاصل ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ ایران اور پاکستان دو اسلامی ممالک ہیں جن کے درمیان دیرینہ تعلقات قائم ہیں، پاکستانی پارلیمنٹ اپنے نئے دور میں برادر ملک ایران کے ساتھ تعلقات کو مزید عروج تک لے جانے کے لئے پُرعزم ہے.
اسد قیصر نے کہا کہ دونوں ممالک کی قیادت مشترکہ تعلقات کو فروغ دینے کے علاوہ معاشی سرگرمیوں کی توسیع اور مشترکہ چیلنجز کا مقابلہ کرنے کی خواہاں ہیں.
انہوں نے مزید کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ ایران اور پاکستان سے متعلق معاملات کو حکومتی سطح پر دیکھنے کے علاوہ اس پر پارلیمنٹ میں بھی بحث کی جائے جس کا مقصد باہمی تعلقات کو بڑھانے میں مزید کردار ادا کرنا ہے.
پاکستانی اسپیکر نے علاقائی صورتحال بالخصوص مشرق وسطیٰ کے حالات کے پیش نظر ایران اور پاکستان کے کردار پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک علاقائی مسائل کے حل کے لئے اہم کردار ادا کرسکتے ہیں.
انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ پاکستان خطے میں تمام مسائل کے پُرامن حل کا مطالبہ کرتا ہے.
اسد قیصر نے مزید کہا کہ پاکستان چاہتا ہے کہ اسلامی ممالک کو درپیش چیلنجز اور کشیدگی کو سنجیدگی سے اور مذاکرات کی میز پر حل کیا جائے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@