دشمن ایران کو تباہ کرنا چاہتے ہیں: ظریف

تہران، 24 جون، ارنا – ایرانی وزیر خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ دشمن کا مقصد ایرانی نظام اور ایرانی حکومت نہیں بلکہ وہ ایران کو تباہ کرنا چاہتے ہیں.

یہ بات محمد جواد ظریف' نے اتوار کے روز ایران کے چیمبر آف کامرس کے اراکین کےساتھ منعقدہ ایک نشست سے خطاب کرتے ہو‏ئے کہی.

ظریف نے کہا کہ ایران کچھ طاقتوں کےمقاصد کے حصول میں سب سے بڑی رکاوٹہے اسی لیے وہ ایران کی تباہی کے خواہاں ہیں.

انہوں نے جوہری معاہدے پر بعض ملکی ناقدین کےسوال کے جواب میں کہا کہ یہ بات صرف جوہری معاہدے کی بات نہیں ہے کیونکہ اس سے پہلے ٹرمپ نے ایشیا پیسفک اقتصادی تعاون (ایپک) NAFTA''اور 'پریس معاہدے' جیسے دیگر معاہدوں کو نظر انداز کر دیا ہے.

انہوں نے کہا کہ امریکہ جوہری معاہدے کو ختم کرنا اور ایران کو اس عالمی معاہدے سے پسپائی پر مجبور کرنا چاہتا ہے .

انہوں نے کہا کہ یقینی طور پر اس کا یہ مطلب نہیں ہے کہ ہم کسی بھی حالت میں اس معاہدے پر قائم رہیں گے.

ظریف نے انٹرنیشنل فینانشیل ایکشن ٹاسک فورس'FATF کے موضوع کے حوالے سے کہا کہ جیسا کہ ہم نےایرانی سپریم لیڈر کے حکم کے مطابق جوہری معاہدے کے تناظر میں اپنے وعدوں پر عمل کیا ہے ایرانی قائد کے احکامات کے تحت، منی لانڈرنگ کی روک تھام اور دہشت گردی کی فنڈنگ بند کرنے کے لیے کام کرسکتے ہیں.

9410*274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے.