امریکہ کو جلد اپنی غلطیوں کا احساس ہوگا: ایرانی وزیر تیل

تہران، 22 جون، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر تیل نے کہا ہے کہ حالیہ دنوں میں عالمی تیل قیمت بڑھنے کی اصل وجہ امریکہ کی ایران پر دباؤ بڑھانے کی کوشش ہے تاہم امریکہ کو جلد اپنی غلطیوں کا نتیجہ بھگتنا پڑے گا.

یہ بات ''بیژن نامدار زنگنہ'' نے امریکی نیوز چینل سی این این کو خصوصی انٹریو دیتے ہوئے کہی.

انہوں نے مزید کہا کہ ایران مخالف امریکی عزائم بے اثر ہوں گے اور انھیں جلد اس کا بات پتہ چل جائے گا.

زنگنہ نے کہا کہ عالمی منڈی کی صورتحال اور تیل کی قیمت پیداوار اور فروخت کی وجہ نہیں بلکہ امریکی صدر کے اقدامات اور وہاں کی انتظامیہ کی پالیسی ہے.

انہوں نے مزید کہا کہ 8 مئی کو امریکہ کی جوہری معاہدے سے علیحدگی کے بعد تیل کی قیمت ایک ہفتے کے دوران 6 ڈالر کا اضافہ ہوا لہذا یہ بات ظاہر ہوتی ہے کہ خطے میں سیاسی تناؤ اور منڈی میں ابہامات کی وجہ امریکی پالیسی ہے.

ایرانی وزیر تیل نے کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ ملک کی تیل برآمدات کی سطح کو برقرار رکھیں تاہم اس کے بارے میں مزید کچھ نہیں کہیں گے کیونکہ امریکہ ہمارے تیل پارٹرز کو نشانہ بنارہا ہے.

انہوں نے مزید کہا کہ ایران میں نظام کی تبدیلی، امریکہ کی سب سے بڑی غلطی ہے، امریکہ میں جان بولٹن اور دیگر کا یہ خیال ہے کہ وہ ایران میں نظام کو تبدیل کرسکتے ہیں لیکن ہماری مزاحمت سے انھیں جلد پتہ چل جائے گا کہ وہ غلط راستے پر گامزن ہیں.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@