سی ٹی ایف معاہدے میں ایران کی شمولیت کا فیصلہ قائد کی ہدایات کے تحت کریں گے: لاریجانی

تہران، 21 جون، ارنا - ایرانی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے کہا ہے کہ دہشتگردی کے لئے انسداد مالی معاونت کے عالمی معاہدے (CTF) میں اسلامی جمہوریہ ایران کی شمولیت کا فیصلہ قائد اسلامی انقلاب کی حالیہ ہدایات کے مطابق کیا جائے گا.

یہ بات 'علی لاریجانی' نے جمعرات کے روز تہران میں اعلی صوبائی حکام کے اجلاس کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے ایران کی سی ٹی ایف معاہدے میں شمولیت سے متعلق قیاس آرائیوں پر تبصرہ کرتے ہوئے مزید کہا کہ یقینا سپریم لیڈر کی خدمت میں اس مسئلے کو اٹھائیں گے اور انھی کی ہدایات کے مطابق ضروری اقدامات کئے جائیں گے.

یاد رہے کہ ایرانی سپریم لیڈر حضرت آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای نے گزشتہ روز اراکین پارلیمنٹ سے خطاب کرتے ہوئے فرمایا تھا کہ پارلیمنٹ، انسداد دہشتگردی اور مالی بدعنوانی جیسے مسائل پر مستقل قانون سازی کرے.

انہوں نے عالمی انسداد منی لانڈرنگ گروپ (FATF) میں ایران کی شمولیت کے بل کے حوالے سے بھی فرمایا کہ ایرانی پارلیمنٹ بالغ اور عقل مند ادارہ ہے لہذا دہشتگردی اور مالی بدعنوانی جیسے مسائل سے نمٹنے کے لئے پارلیمنٹ کی جانب سے مستقل قانون سازی کی ضرورت ہے.

قائد انقلاب نے مزید فرمایا تھا کہ اس بات کا بھی امکان ہوسکتا ہے کہ بعض عالمی معاہدے کے مفادات اچھے ہوں تا ہم اس قسم کے معاہدوں کو بنیاد بنا کر دوسرے معاہدوں میں شمولیت کا مطالبہ کرنا جن کا مقصد ہی واضح نہ صحیح نہیں ہے.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@