سو یورپی کمپنیاں ایران کیساتھ تعاون کیلئے مذاکرات پر آمادہ

تہران، 21 جون، ارنا - 100 یورپی کمپنیاں اسلامی جمہوریہ ایران کے مختلف شعبوں میں تعاون اور سرمایہ کاری کے لئے جلد ایرانی فریقین کے ساتھ مذاکرات کا آغاز کریں گی.

یہ بات یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کی سیکریٹری جنرل ''ہلگا اشمیت'' نے ناروے میں ایران کے جوہری ادارے کے سربراہ ''علی اکبر صالحی'' کے ساتھ ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے مزید کہا کہ جلد یورپ کی 100 کمپنیاں ایرانی فریقین کے ساتھ مذاکرات کا آغاز کریں گی جنہیں یورپی یونین کی براہ راست حمایت بھی حاصل ہوگی.

انہوں نے اس امید کا اظہار کیا کہ ایران اور یورپی کمپنیوں کے درمیان تعاون کے فروغ کے لئے موثر حکمت عملی اپنائی جائے گی.

ہلگا اشمیت نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ یورپ ماضی سے زیادہ ایران جوہری معاہدے کو برقرار رکھنے کے لئے پُرعزم ہے اور اس مقصد کو پانے کے لئے ایک موثر میکنزم پر عمل پیرا ہوں گے.

انہوں نے ایران اور یورپی ممالک کے درمیان مالیاتی اور بینکاری شعبوں میں تعلقات کی بحالی سے متعلق کہا ہے کہ ان شعبوں میں مشترکہ تعاون کو بڑھانے کے لئے موثر طریقہ کار اپنایا جائے گا.

اس ملاقات میں ایران کے جوہری توانائی ادارے کے سربراہ نے کہا کہ جوہری معاہدے کے تحفظ کے لئے اب تک قابل اطمینان اقدامات اٹھائے گئے ہیں تاہم اس معاہدے کے مکمل تحفظ کے لئے مزید عملی اقدامات کرنے کی ضرورت ہے.

علی اکبر صالحی نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی نظر میں پابندیوں کے ہوتے ہوئے جوہری معاہدے پر قائم رہنا ہرگز قابل قبول نہیں.

انہوں نے یورپی یونین پر زور دیا کہ وہ اپنی پالیسی سے متعلق عملی اقدامات کرے.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@