ایران نے ملک میں دہشتگردوں کے داخلے پر عراقی کُردستان سے احتجاج کیا

اربیل، 13 جون، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران نے عراق کے ساتھ ملحقہ سرحدی علاقے سے دہشتگردوں کے ملک میں داخلے کے واقعے پر عراقی خطے کُردستان کے حکام سے احتجاج کیا ہے.

عراقی کردستان کے مرکز اربیل میں تعینات ایرانی قونصلٹ جنرل کے ایک وفد نے کردستان کے خارجہ تعلقات آفس کی خاتون عھدیدار' سیہام مامند' کے ساتھ ایک ملاقات مشترکہ سرحدی علاقے سے دہشتگردوں کے داخلے پر احتجاجی مراسلہ حوالہ کردیا.
اس ملاقات میں خاتون عہدیدار نے مشترکہ سرحدی علاقوں میں حالیہ واقعات پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ یقینا ہم عراقی کردستان اور ایران کے درمیان مثبت تعلقات کو متاثر کرنے کی ہرگز اجازت نہیں دیں گے.
انہوں نے مزید کہا کہ ایران کے ساتھ باہمی تعلقات کو مزید مستحکم بنانا ہماری اہم ترجیح ہے.
عراقی کردستان کی خاتون عہدیدار نے کہا کہ کردستان کی حکومت اپنے مفادات کو کسی ملک یا گروہ کی خاطر خطرے میں نہیں ڈالے گی.
یاد رہے کہ گزشتہ دنوں ایران کی عراقی کردستان سے ملحقہ مغری سرحد سے دہشتگردوں نے ملک میں داخل ہونے کی کوشش کی تھی تاہم سیکورٹی فورسز نے بروقت آپریشن کرتے ہوئے دراندازی کرنے والوں کو ہلاک کردیا.
9410*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@