سعودی اور صہیونی امام خمینی کے افکار کو جھٹلانے میں ہمیشہ آگے ہیں

نیو یارک، 4 جون، ارنا - امریکی ریاست کیلی فورنیا یونیورسٹی کے پروفیسر نے کہا ہے کہ آل سعود اور ناجائز صہیونی ریاست امریکہ کے ساتھ مل کر دنیا میں انتہاپسندی کو فروغ دینے کے لئے بانی اسلامی انقلاب حضرت امام خمینی (رح) کے اتحاد اور بھائی چارے پر مبنی افکار کو جھٹلانے میں سب سے آگے ہیں.

ان خیالات کا اظہار سان برنارڈینو میں کیلیفورنیا کی اسٹیٹ یونیورسٹی میں تاریخ کے پروفیسر 'ڈیوڈ یعقوبیان' نے ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا.

انہوں نے کہا کہ ایران میں اسلامی انقلاب کی کامیابی سے عالم اسلام میں اتحاد کا پیغام اُجاگر ہوا جس سے امریکہ، صہیونی اور سعودی حکمران خوفزدہ ہوگئے.

انہوں نے مزید کہا کہ امریکہ، سعودی عرب اور اسرائیل دنیا مین انتہاپسندی اور وہابیت کی سوچ کو فروغ دینے کے لئے آپس می ںملے ہوئے ہیں جبکہ وہ فرقہ واریت کو ہوا دینے کے لئے امام خمینی (رح) کے افکار کو جھوٹلا رہے ہیں.

پروفیسر ڈیوڈ یعقوبیان نے کہا کہ بانی عظیم انقلاب کی سوچ اور سیاسی حکمت عملی دنیا میں سامراجیت کے خلاف مقابلہ اور مظلوم اقوام کی حمایت کے لئے مثالی ہیں.

انہوں ںے مزید کہا کہ ایران میں شہنشاہ کے خلاف مذہبی انقلاب کی کامیابی سے مغربی ممالک کی جامعات میں معاشرتی اور انقلابوں کے حوالے سے پڑھائے جانے والے مواد پر سوالیہ نشان اٹھایا.

انہوں نے کہا کہ امام خمینی (رح) نے پہلوی حکومت کے خاتمے اور ایران میں اسلامی جمہوری نظام کے قیام کے لئے ایک ایسی مثالی حکمت عملی جو دین کے خلاف مارکسسٹ نظریے کو چیلنج کردیا.

پروفیسر ڈیوڈ یعقوبیان نے کہا کہا آج دنیا امام خمینی (رح) کے افکار سے متاثر ہے کیونکہ انہوں نے سماجی اور سیاسی تحریک کے لئے انسانی طاقت کے عظیم سمندر کو روشناس کرایا.

انہوں نے مزید کہا کہ ایران کے خلاف میڈیا مہم عروج پر ہے جس کا مقصد امام خمینی کو فرقہ پرست لیڈر دیکھانا ہے جبکہ بانی انقلاب نے اپنے وصیت نامے میں اسلامی ممالک کے عوام پر زور دیا کہ دنیا میں ظلم و بربریت کے خلاف متحد ہوں.

پروفیسر ڈیوڈ یعقوبیان نے کہا کہ امام خمینی (رح) جیسے لیڈروں نے ایمان، اتحاد اور خوداعتمادی کے نظریے کو زندہ رکھا ہوا ہے جو دنیا میں امریکہ کی سامراجی منصوبوں کے لئے بڑا خطرہ ہے.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@