چین اور یورپ کا ایران جوہری معاہدے کو برقرار رکھنے پر زور

تہران، 2 جون، ارنا - چین اور یورپی یونین نے اس بات پر اتفاق کیا ہے کہ وہ ایران جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی کے باوجود اس معاہدے کو برقرار رکھنے کے لئے کسی بھی کوشش سے دریغ نہیں کریں گے.

یہ فیصلہ یورپی یونین کی چیف خارجہ پالیسی 'فیڈریکا مغرینی' اور چینی وزیر خارجہ 'وانگ یی' نے بروسلز میں مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا.

امریکی خبر رساں ادارے ایسوسی ایٹڈ پرس کے مطابق، دونوں رہنماؤں نے اس بات پر زور دیا کہ بیجنگ اور بروسلز ایران جوہری معاہدے کو بچانے کے لئے مل کر کام کریں گے.

اس موقع چینی وزیر خارجہ نے کہا کہ ان کا ملک ایران جوہری معاہدے کے سلسلے کو جاری رکھنے کے لئے ثابت قدم ہے.

وانگ یی نے مزید کہا کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے بھی جوہری معاہدے کی توثیق کردی تھی لہذا تمام فریقین کی ذمہ داری ہے کہ جوہری معاہدے کے نفاذ کو یقینی بنائیں.

انہوں نے کہا کہ چین، یورپی یونین اور دنیا کے دیگر ممالک کے ساتھ مل کر ایران کو اس بات کی یقین دہانی کرائیں گے کہ وہ جوہری معاہدے سے متعلق اقتصادی مفادات سے مستفید ہوگا.

اس موقع پر خاتون یورپی رہنما نے چین کے کردار کو سراہتے ہوئے اس عزم کا اعادہ کیا کہ یورپی یونین، چین اور دیگر اتحادیوں سے مل کر ایران جوہری معاہدے کو برقرار رکھے گی.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@