امریکہ، ایران جوہری معاہدے سے نکل کر عالمی برادری کی راہ سے منحرف ہوا: چینی دانشور

بیجنگ، 26 مئی، ارنا - خاتون چینی دانشور اور اکیڈمی برائے سوشل اور سیاسی سائنسز کی ڈائریکٹر نے کہا ہے کہ امریکہ، ایران جوہری معاہدے سے نکل کر عالمی برادری کی راہ سے منحرف ہوا ہے جس سے امریکی ساکھ کو بھی نقصان پہنچا ہے.

یہ بات ڈاکٹر 'لو جین' نے ہفتہ کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں نے کہا کہ جوہری معاہدہ اسلامی جمہوریہ ایران اور دوسری طاقتوں کے درمیان ایک چند فریقی سمجھوتہ ہے جو امریکہ اس کی خلاف ورزی کرکے مگر چین، روس اور یورپ اس کے تحفظ پر زور دے رہے ہیں.
لو جین نے کہا کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے اس معاہدے کو منظور کرلیا ہے اور عالمی ایٹمی توانائی ایجنسی نے اپنی متعدد رپورٹوں میں ایران کی دیانتداری کی تصدیق کی لہذا دوسرے فریقین اس کے تحفظ کے لئے پر عزم ہیں.
انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ مشرق وسطی کا بڑا مشکل بڑی طاقتوں کی مداخلت ہے جو اپنے مفادات کی فراہمی کے لئے بڑھتی ہوئی تنازعات کا باعث ہوگئی ہیں.
انہوں نے کہا کہ مشرق وسطی دنیا کا اہم حصہ ہے جو اس کی سلامتی ایشیا، یورپ اور دوسرے علاقوں سے متعلق ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ مغربی طاقتیں اپنے سیاسی اور اقتصادی مفادات کی فراہمی کے لئے مشرق وسطی میں بدامنی کے واقعات پیدا کر رہی ہیں اور آج مشرق وسطی میں اہم موضوعات سمیت ایران جوہری معاہدہ، شام میں جنگ اور مسئلہ فلسطین موجود ہے جو ان کے حل کے لئے مناسب اقدامات اٹھانا جانا چاہیئے.
لو نے کہا کہ عراق اور افغانستان کے جنگ کے بعد امریکہ کی طاقت کمزور ہوگئی اور وہ اپنے مقاصد کی تک رسائی حاصل نہ کرسکا.
خاتون چینی دانشور اور اکیڈمی برائے سوشل اور سیاسی سائنسز کی ڈائریکٹر نے کہا کہ مشرق وسطی میں اسلامی جمہوریہ ایران سلامتی برقرار رکھنے کے لئے تعمیری کردار ادا کر رہا ہے جس ملک اقتصادی اور فوجی حیثیت کی لحاظ سے بہت ہی طاقتور ہے.
انہوں نے کہا کہ ایران اپنی سفارتی پالیسیوں، تیل اور گیس کے ساتھ دنیا کی توانائی پیدا کرنے والے سب سے بڑا ملک ہے.
انہوں نے کہا کہ ایران خطے کے بحرانوں کے حل کے لئے بہت سی کوششیں کر رہا ہے اور اس ملک نے آستانہ میں شامی امن مذاکرات اور عراق میں اہم کردار ادا کیا.
انہوں نے کہا کہ چین ایران کے سب سے بڑے شراکت دار ملک ہے اور دوطرفہ تعلقات کو فروغ دینے کے خواہاں ہیں.
انہوں نے کہا کہ چین نے ایران اور دوسرے ممالک کے خلاف عائد ہونے والی پابندیوں کی مذمت کرکے مغربی طاقتوں کی جانب سے دوسرے ممالک کے اندرونی مسائل کی عدم مداخلت پر زور دے رہا ہے.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@