ایران پر امریکی دباو کا مقصد مزاحمتی عمل کو روکنا ہے: حسن نصراللہ

بیروت، 26 مئی، ارنا – لبنان کی مزاحمتی جماعت حزب اللہ کے سیکریٹری نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف امریکی دباو اور پابندیوں کا واحد مقصد مزاحمتی فرنٹ کو ملنے والے ایرانی مدد اور تعاون کو روکنا ہے.

یہ بات 'سید حسن نصراللہ' نے گزشتہ روز جنوبی لبنان کے علاقے کے ١٨ویں یوم آزادی کی سالگرہ کی مناسبت سے خطاب کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے امریکہ کی جانب سے حزب اللہ کے بعض رہنماوں کو بلیک لیسٹ کی فہرست میں شامل کرنے پر کہا کہ نئی امریکی پابندیوں کا مقصد لبنانی قوم اور حکومت کے درمیان تنازعات پیدا کرنا ہے.

انہوں نے حزب اللہ کو امریکی نئی پابندیوں کے سامنے اپنے شہریوں کی حفاظت کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے کہا کہ امریکہ ان نئی پابندیوں سے مزاحمتی تحریک کے یورپی اور افریقی حامیوں کا بدلہ لینا چاہتا ہے.

انہوں کہا کہ نئی امریکی پابندیوں کے مقاصد میں سے ایک براہ راست عوام اور مزاحمتی فرنٹ کی حمایت کرنے والوں پر دباو ڈالنا اور ڈرانا ہے جبکہ یہ امریکہ، صہیونی اور ان کے اتحادی کی بڑی غلطی ہے کیونکہ لبنانی عوام اپنے ملک کے دفاع کے لیے کسی بھی کوشش سے دریغ نہیں کریں گے.

حزب اللہ کے سیکریٹری نے اپنے بیان کے اختتام پر صیہونی حکومت کے قبضے سے جنوبی لبنان کے علاقے کی آزادی کے لیے ایران کی بھرپور کوششوں پر شکریہ ادا کیا.

9410*274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@