ایران جوہری معاہدے کو عدم تحفظ کی صورت میں سنگین نتائج برآمد ہوں گے: پیوٹن

ماسکو، 25 مئی، ارنا - روسی صدر ولادیمئیر پیوٹن نے کہا ہے کہ ایران جوہری معاہدے کے عدم تحفظ کی صورت میں سنگین نتائج برآمد ہوں گے.

یہ بات انہوں نے سینٹ پیٹرزبرگ بین الاقوامی اقتصادی فورم کے موقع پر اپنے فرانسیسی ہم منصب ایمنویل میکرون کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے کہا کہ انہوں نے اپنے فرانسیسی ہم منصب کے ساتھ ایران جوہری معاہدے سے امریکہ کی علیحدگی کے اقدام کے حوالے سے تفصیلی بات چیت کی ہے.

اس موقع پر پیوٹن نے فرانس اور دیگر یورپی ممالک کی جانب سے ایران جوہری معاہدے کے نفاذ کی حمایت کے فیصلے کو سراہتے ہوئے کہا کہ روس نے کبھی بھی یکطرفہ اقدامات اور پالیسیوں کی حمایت نہیں کی ہے اور نا ہی روس نے کبھی کسی ملک پر کسی طرح سے پابندیوں کی حمایت کی ہے.

روسی صدر نے عالمی جوہری توانائی ادارے کے سربراہ یوکیا امانو کے ساتھ اپنی ملاقات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ عالمی جوہری توانائی ادارے کے سربراہ نے متعدد بار یہ بات پہلے بھی کہی ہے کہ ایران نے ہمیشہ جوہری معاہدے کے حوالے سے اپنے وعدوں کی پاسداری کی ہے.

271**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@