برلن اور بیجنگ ایران جوہری معاہدے کے حامی ہیں: جرمن چانسلر

بیجنگ، 24 مئی، ارنا - جرمن چانسلر 'انگیلا میرکل' نے کہا ہے کہ جرمنی اور چین، ایران جوہری معاہدے میں امریکی موجودگی کے بغیر اس کی حمایت کرتے ہیں.

یہ بات 'انگیلا میرکل' نے جمعرات کے روز چینی دارالحکومت بیجنگ میں چین کے وزیراعظم 'لی کی چیانگ' کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہی.

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ امریکی علیحدگی کے باوجود ہم ایران جوہری معاہدے کی موجودہ شکل میں حمایت کرتے ہیں.

انہوں نے مزید کہا کہ ایران مخالف پابندیوں کی وجہ سے ممکنہ طور پر بعض یورپی کمپنیاں شاید ایران سے نکلنے کا فیصلہ کریں مگر جرمنی اس معاہدے پر قائم رہے گا.

جرمن چانسلر نے کہا کہ 2015 کو ایران کے ساتھ طے پانے والا معاہدہ ایک جامع اور مکمل معاہدہ تو نہیں مگر موجودہ سمجھوتے کا کوئی نعم البدل بھی نہیں ہے.

یہ بات قابل ذکر ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے 8 مئی کو ایک بار پھر ایران اور جوہری معاہدے کے خلاف پرانے الزامات کو دہرا کر اس معاہدے سے امریکہ کی علیحدگی کا اعلان کردیا تھا.

ٹرمپ نے ایران کے خلاف پرانی ہرزہ سرائیوں کو دہراتے ہوئے کہا کہ وہ ایران پر دوبارہ پابندیاں لگانے کے حکم نامے پر دستخط کریں گے.

ٹرمپ کی علیحدگی کے ردعمل میں یورپی ممالک نے کہا کہ وہ ایران جوہری معاہدے پر قائم رہیں گے.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@