اسپین کا ایران مخالف امریکی پابندیوں کا مقابلہ کرنے پر غور

میڈرڈ، 23 مئی، ارنا - اسپین کے وزیرخزانہ اور صنعت نے کہا ہے کہ امریکہ کی ایران جوہری معاہدے سے علیحدگی کے باعث پیدا ہونے والی مشکلات کے حوالے سے برسلز کے ساتھ تعاون کر رہے ہیں تاکہ ایران میں موجود اسپین کی کمپنیوں کو کام کرنے میں کوئی مشکل درپیش نا آئے.

یہ بات رومان ایسکولانو نے اسپین کے سینٹ اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے کہا کہ اسپین کے پاس پورا اختیار ہے کہ وہ اسپین کی کمپنیوں کے اثاثوں کی نگرانی کر سکتا ہے اور انہیں امریکہ کی جانب سے پابندیوں کے ملحقہ خطرے سے محفوظ کر سکتا ہے.

انہوں نے کہا کہ یورپی یونین کی جانب سے اس بات کا اعادہ کیا گیا ہے کہ وہ ایران کے ساتھ اچھے تعلقات برقرار رکھیں گے ایران نے جوہری معاہدے کے حوالے سے اپنے وعدوں کی پاسداری کی ہے.

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے 8 مئی 2018 کو ایران جوہری معاہدے سے علیحدگی کا فیصلہ سامنے آنے کے بعد اسپین حکومت کی جانب سے اعلان کیا گیا کہ وہ اس معاہدے کو برقرار رکھنے کے حوالے سے یورپ کی حمایت کا سلسلہ جاری رکھیں گے.

271**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@