امریکی غصے کی وجہ خطے میں اس کی شکست ہے: بروجردی

بیروت، 23 مئی، ارنا - ایرانی پارلیمنٹ کی خارجہ پالیسی اور قومی سلامتی کمیٹی کے چیئرمین نے کہا ہے کہ امریکہ آج اس لئے غم و غصے کا شکار ہے کیونکہ ایران نے عراق اور شام میں اس کی سازشوں کو بے نقاب کردیا ہے.

یہ بات 'علاء الدین بروجردی' نے منگل کے روز المیادین نیوز چینل سے گفتگو کرتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں نے امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کے حالیہ ایران مخالف بیانات پر اپنے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس کو جاسوسی کا آلہ کے بجائے سفارتی زبان کو سیکھنا چاہیئے.
بروجردی نے اس بات پر زور دیا کہ عراق اور شام میں ایران کی فوجی موجودگی ان ممالک کی حکومتوں کی درخواستوں کی مبنی پر ہے.
انہوں نے کہا کہ امریکہ جان لے کہ ہم اپنے ملکی پانیوں میں سامراجی طاقتوں کو گرفتار کر رہے ہیں لہذا اگر وہ اپنے غلطی اقدامات کو جاری رہے تو منہ طور پڑ جواب کا سامنا ہوگا.
اعلی ایرانی رکن پارلیمنٹ نے یورپ کی پالیسیوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے موقف پر عملدرآمد کریں.
انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ اسلامی جمہوریہ ایران یورپ سے جوہری معاہدے کے تحفظ کے لئے مناسب ضمانت کا مطالبہ کر رہا ہے.
یاد رہے کہ امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے پیر کے روز ایران سے متعلق امریکہ کی نام نہاد نئی پالیسی کا اعلان کیا ہے.
علاوہ ازیں مائیک پومپیو نے ایران مخالف من گھڑت الزامات کو دہرا کر یہ بھی دعویٰ کیا کہ امریکہ، ایران پر تاریخ کی سخت ترین پابندیاں عائد کرے گا. پابندیوں کے بعد ایران کو اپنی معیشت کی بقا کا مسئلہ پڑ جائے گا.
9393*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@