ایران میں یورپی کمپنیوں کی سرمایہ کاری بڑھ رہی ہے

تہران، 20 مئی، ارنا – ایرانی وزیر توانائی نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران میں یورپی کمپنیوں کی سرمایہ کاری بڑھ رہی ہے. یہ بات 'رضا اردکانیان' نے گزشتہ روز ایران کے دورے پر آئے ہوئے یورپی یونین کے توانائی کمشنر 'مگیل آریس کینٹی' کے ساتھ ایک ملاقات کے بعد صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہی.

اس موقع پر انہوں نے موسم خزان میں دارالحکومت تہران میں 'یورپ کی چھوٹی اور درمیانی کمپنیوں کی سرمایہ کاری' کے نام سے منعقد ہونے والے اجلاس کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ یہ نشست ایران اور یورپی ممالک کے درمیان باہمی تعاون اور سرمایہ کاری بڑھانے کے لئے ایک سنہری موقع ہے.

اردکانیان نے کہا کہ ایران اور یورپی یونین کے درمیان انجام ہونے والے مذاکرات کے ساتھ نہ صرف باہمی تعاون معطل نہیں ہوکر بلکہ ان کے ذریعہ چھوٹی اور درمیانی سرمایہ کاری ممکن ہوجائے گی.

یورپی یونین کے توانائی کمشنر نے اس بات پر زور دیا کہ بلغاریہ کے دارالحکومت صوفیہ میں یورپی یونین کے حکام نے منعقدہ سربراہی اجلاس میں ایران کے سامنے اپنے تمام وعدوں کے مطابق عمل کرنے پر اتفاق کیا.

مگیل آریس کینٹی نے ایرانی وزارئے تیل، توانائی اور اپنے ایرانی ہم منصب 'علی اکبر صالحی' کے ساتھ ملاقاتوں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ جوہری معاہدے سے امریکہ کی علیحدگی کی بنا پر یورپی یونین نے ایران میں سرمایہ کاری کے لئے رکاوٹوں کو دور کرنے کے مقصد سے ایک کمیشن قائم کیا ہے.

انہوں نے تیل کی برآمدات سے فنڈز ٹرانسفر کے لئے یورپی طریقوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ امریکہ کی جانب سے ایران مخالف پابندیوں کی بنا پر یورپی یونین اس حوالے سے مشکلات کے خاتمے کے لئے بھرپور کوشش کرے گا.

انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے دورے سے ہمارا مقصد اس کرنسی کی منتقلی پر پابندیوں کے اثرات کا خاتمہ کرنا ہے.

9393**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@