بعض عرب ممالک عالم اسلام کی مشکلات پر آنکھیں بند کئے ہوئے ہیں: ظریف

استنبول، 18 مئی، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ آج بعض عرب ممالک امریکہ اور ناجائز صہیونی ریاست کے ساتھ ایک محاذ پر کھڑے ہیں اور وہ عالم اسلام کو درپیش چینجلز اور مشکلات پر اپنی آکھیں بند کئے ہوئے ہیں.

یہ بات 'محمد جواد ظریف' نے جمعہ کے روز ترکی کے شہر استنبول میں اسلامی تعاون تنظیم (OIC) کے ہنگامی اجلاس کے موقع پر ارنا نیوز ایجنسی کے نمائندے کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے مزید کہا کہ بدقسمتی سے ان میں سے بعض عرب ممالک ایسے ہیں کہ وہ فلسطینی قوم کی حمایت کرنے کے بجائے امریکہ اور صہیونیوں کا ساتھ دیتے ہوئے سنگین جرائم میں برابر کے شریک ہیں.

ظریف نے کہا کہ حالیہ دنوں اور غزہ میں صہیونی جارحیت کے فورا بعد یہی ممالک حزب اللہ کو دہشتگرد گروہوں کی فہرست میں شامل کردیا جبکہ حزب اللہ واحد عربی گروہ ہے جس نے اسلامی ریاستوں میں صہیونی قبضے کے خلاف زبردست مقابلہ کیا.

انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ صہیونی جرائم کی روک تھام بالخصوص امریکی سفارتخانے کی بیت المقدس منتقلی کے بعد کی صورتحال سے نمٹنےکے لئے عالم اسلام کو چاہئے سنجیدگی سے آپس میں ہماہنگی کو فروغ دے اور عالمی سطح پر فلسطینیوں کی حمایت کے لئے موثر اقدامات اٹھائے.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@