امریکی صدر کے ایران جوہری معاہدے کے فیصلے سے دنیا میں تشویش بڑھ گئی: روسی نائب وزیرخارجہ

ماسکو، 15 مئی، ارنا - روس کے نائب وزیر خآرجہ 'سرگئی ریبکف' نے کہا ہے کہ امریکہ کی ایران جوہری معاہدے سے علیحدگی بین الاقوامی سطح پر تشویق میں اضافہ کردے گا.

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ماسکو میں سیاسی دانشوروں کی ایک تقریب کے دوران کیا.

انہوں نے کہا امریکی صدر کے فیصلے کی وجہ ایران کی مشرقی وسطی میں پالیسی اور ان ممالک میں بڑھتی ہوئی اثرورسوخ ہے.

روس کے نائب وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ خود امریکہ کے سیاسی زمہ داروں کو اس بات پر یقین ہے کہ ایران کے جوہری معاہدے اچھی سمت پر جارہی ہے.

ایران کے دفاعی میزائل سیسٹم کی ترقی پر امریکہ اور ان کے اتحادیوں کی تشویش کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ امریکہ ایرانی میزائلوں سے خوف زدہ ہے.

انہوں نے مزید کہا کہ روس ایرانی جوہری معاہدے پر عملدرآمد جاری رکھے گا اور امید ہے کہ یورپی ممالک بھی اس پر پوری زمہ داری کے ساتھ عمل درآمد جاری رکھیں گے.

یاد رہے کہ امریکہ کے صدر نے گذشتہ ہفتے میں 2015 میں ایران اور عالمی طاقتوں کے درمیان طے پانے والے بین الاقوامی جوہری معاہدے سے نکلنے کا اعلان کیا.

انہوں نے دعوی کیا کہ اس معاہدے سے مشرقی وسطی میں نہ صرف ایران کی پالیسی میں تبدیلی نہیں آئی بلکہ ایران اپنا میزائل سیسٹم کو مزید ترقی دے رہا ہے.

پاکستان سمیت عالمی برادری نے ڈونلڈ ٹرمپ کے اس اقدام کی شدید مذمت کی ہے.

1*271**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@