یورپی ممالک امریکہ کو یکطرفہ کاروایی کرنے سے لگام دیں: ایرانی نائب صدر

تہران،14 مئی، ارنا – اسلامی جمہوریہ ایران کے نائب صدر'اسحاق جہانگیر'نے کہا ہے کہ ایران جوہری معاہدے سے امریکہ کی دستبرداری کے رد عمل میں یورپی ممالک اپنا بھرپور کردار ادا کریں.

یہ بات انہوں نے بلغاریہ کے وزیر اقتصاد 'امل کرنیکوف' سے ایک ملاقات کے دوران کہی.

اس موقع پر انہوں نے کہا کہ امریکہ کہ یہ اقدام بین الاقوامی قوانین کے کھلا خلاف ورزی ہے جس کے نتیجے میں دنیا میں بین الاقوامی قانون توڑنے میں ایک نیا رحجان پیدا ہوگا.

انہوں نے امریکہ کے یکطرفہ اقدامات کو روکنے پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ یورپی یونین کو چاہیئے کہ وہ امریکہ کو لگام دیں، امریکہ ایسے موقع پرایرانی جوہری معاہدے سے نکل رہا ہے کہ بین الاقوامی ایٹمی توانایی ایجنسی نے اپنی رپورٹوں میں ایران کا جوہری معاہدے پر مکمل عمل درآمد کی تایید کی ہے.

خطے میں دہشت گردی کی امریکی کی کھی حمایت کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس ایسے شواہد موجود ہے جس سے ثابت ہوتا ہے کہ امریکہ داعش سے حمایت کررہا ہے اور سعودی عرب بھی اس دہشت گرد تنظیم کی مالی مدد کررہا ہے.

انہوں نے دنیا میں تکفیری دہشت گردی کی خطرات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا ہے کہ اسلامی جمہوری ایران پہلے دن سے ہی اس خطرناک دہشت گرد تنظیموں کے خاتمے کے لئے دن اپنا بھرپور فریضہ انجام دے رہا ہے.

بلغاریہ کے وزیر اقتصادی نے بھی اس موقع پر کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران، بلغاریہ اور یورپی ممالک کے لئے اہم ملک ہے جس کی وجہ سے ایران کے ساتھ روابط کے فروغ چاہتے ہیں.

انہوں نے ایران کے ساتھ اقصادی روابط کے توسیع کے لئے اپنی آمادگی کا اعلان کیا ہے.

1*271**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@