ایران کی فرانس کے دہشتگردانہ حملے کی مذمت

تہران، 14 مئی، ارنا – ایرانی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے ہفتہ کی رات کو فرانس کے داراالحکومت پیرس میں ہونے والے دہشتگردانہ حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ دنیا کے ممالک کو تکفیری دہشتگردی اور انتہا پسندی کے جھوٹ نعرے اور نئے پروپیگنڈے سے متاثر نہ ہونا چاہیے.

ترجمان دفترخارجہ 'بہرام قاسمی' نے اپنے ایک بیان میں پیرس میں ہونے والے دہشتگردی کے واقعے پر فرانس قوم اور حکومت کے ساتھ تعزیت کرتے ہوئے جاں بحق ہونے والوں کے لواحقین سے ہمدردی کا اظہار کیا.

انہوں نے کہا کہ داعش دہشت گرد گروہ کی جانب سے ایسے شرمناک اور وحشیانہ اقدام کی ذمہ داری کو قبول کرنے سے یہ بات ظاہر ہوتی ہے کہ یہ خونخوار گروپ خطے میں اپنی مسلسل شکستوں کے چھپانے اور اپنی بقا کے تحفظ کے لیے کسی بھی سازش سے دریغ نہیں کرتا ہے.

انہوں نے کہا کہ داعش کی حمایت کرنے والے ممالک کو دنیا کے ہر کونے میں ہونے والے ایسے انسانی آفتوں کا ذمہ دار قرار دیا.

قاسمی نے کہا کہ دہشتگردی اور انتھاپسندی کو‏ئی خاص مذہب، ملک اور سرزمین سے متعلق نہیں ہے اور دنیا کو داعش کی لعنت سے نمٹنا چاہیے.

تفصیلات کے مطابق، اس حملے کے نتیجے میں ایک جان بحق اور4 افراد زخمی ہوگئے.

اس دہشت گردانہ حملے کی ذمہ داری داعش گروہ نے قبول کی ہے.

یاد رہے کہ پیرس میں ہفتے کی رات ایک مسلح شخص نے دی لے اوپیرا اسکوائر پر ایک شخص کو چھرا گھونپ کر ہلاک کر دیا۔ اس حملے میں آٹھ دیگر افراد زخمی بھی ہوئے جبکہ فرانسیسی پولیس اہلکاروں نے حملہ آور کو فائرنگ کر کے ہلاک کر دیا.

دو ہزار پندرہ سے اب تک فرانس میں 12 دہشت گردانہ حملے ہو چکے ہیں جن میں 240 سے زائد افراد مارے جا چکے ہیں.

9410٭274٭٭

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@