امریکہ خطے میں دہشتگردی کی اصل جڑ ہے:ایڈمیرل شمخانی

تہران، 13 مئی، ارنا - ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے کہا ہے کہ امریکہ، شام اور عراق سمیت علاقائی ممالک میں دہشتگردی، بدامنی و عدم استحکام کی اصل جڑ ہے.

یہ بات ایڈمیرل 'علی شمخانی' نے آج بروز اتوار ایران کے دورے پر آئے ہوئے افغان وزیر دفاع لیفٹیننٹ جنرل 'طارق شاہ بہرامی' کے ساتھ ایک ملاقات میں خطاب کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے امریکہ کو خطے میں دہشتگردوں کی تخلیق کی اصل جڑ قرار دیتے ہوئے کہا کہ بدقسمتی سے خطے کے بعض رجعت پسند عرب ممالک بھی دہشتگردوں کو ہتھیار اور مالی امداد فراہم کر رہے ہیں.

انہوں نے ایران اور افغانستان کے درمیان بڑھتے ہوئے تعلقات کا حوالہ دیتے ہوئے مشترکہ سرحدی علاقوں میں امن و استحکام کے قیام کے لیے سیاسی، اقتصادی، فوجی اور سیکورٹی کے شعبوں میں باہمی تعاون کو مزید بڑھانے پر زور دیا.

ایرانی عھدیدار نے کہا کہ پڑوسی ممالک کے ساتھ دوستانہ اور قریبی تعلقات کو فروغ دینا اسلامی جمہوریہ ایران کی اہم ترجیج ہے.

شمخانی نے افغانستان میں قیام امن و استحکام اور دہشتگردی گروہوں کی مکمل تباہی کو تہران اور کابل کا مشترکہ مقصد قرار دیتے ہوئے کہا کہ تکفیری دہشتگردی جو بدقسمتی سے خطے کے بعض ممالک کی جانب سے حمایت کی جا رہی ہے اسلامی ممالک اور خطی اقوام کے لیے سب سے بڑا خطرہ ہے اور ان کا خاتمہ ممالک کے باہمی اتحاد کے ذریعے سے ممکن ہے.

انہوں نے کہا کہ ہمیں دہشتگردی کی روک تھام کے لیے سیکورٹی اور فوجی اقدامات کے علاوہ داعش کے نظریات اور تفکر کے ساتھ مقابلہ کرنا چاہیے.

اس موقع میں افغان وزیر دفاع نے اپنی اس ملاقات پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایران دوست ملک اور ہمارا دوسرا گھر ہے.

انہوں نے ایران اور افغانستان کے درمیان دیرینہ اور تاریخی تعلقات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ایران ہمیشہ سخت حالات میں ہمارے قوم کے ساتھ شانہ بہ شانہ کھڑا ہے.

جنرل 'طارق شاہ بہرامی' کہا کہ ہم دشمنوں کو اپنے ملک کے ذریعہ ہمسایہ ملک اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف سازش کرنے کی اجازت نہیں دیں گے.

9410٭274٭٭

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@