امریکہ کو ایران جوہری معاہدے سے نکل کر صرف تنہائی ملے گی: خاتون امریکی سیاستدان

تہران، 11 مئی، ارنا - سنیئر خاتون سیاستدان اور رکن امریکی ایوان نمائندگان نے ٹرمپ حکومت کے حالیہ فیصلے پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران جوہری معاہدے سے نکل کر امریکی نصیب میں صرف تنہائی لکھی جائے گی.

یہ بات 'نانسسی پیلوسی' جو امریکی ایوان نمائندگان میں ڈیموکریٹک لیڈر آف ہاؤس ہیں نے اراکین ایوان کے ایک گروپ کے ساتھ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہی.

اس موقع پر انہوں نے ٹرمپ حکومت کے ایران جوہری معاہدے سے نکلنے کے فیصلے کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا.

انہوں نے ایران جوہری معاہدے کو بڑی سفارتی فتح اور ماہرانہ سفارتکاری عمل کا نتیجہ قرار دیتے ہوئے امریکی صدر کے اقدام پر کڑی تنقید کی.

خاتون امریکی سیاستدان نے مزید کہا کہ ایک سروے کے مطابق 60 فیصد امریکی عوام جوہری معاہدے سے نکلنے کے مخالف ہیں. عالمی ماہرین، سائنسدان، جوہری امور کے پروفسیرز اور نوبل انعام یافتہ شخصیات نے اتفاق رائے کے ساتھ اس مؤقف کا اعلان کیا ہے کہ ایران جوہری معاہدے مستقبل میں تخفیف اسلحہ کے مقاصد کے لئے ایک روشن مثال ہے.

انہوں نے کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ کے خطرناک فیصلے سے امریکہ، ایران کے سامنے تنہائی کا شکار ہوا، دنیا میں ہماری ساکھ متاثر ہوئی اور ایک بار پھر ایران کی جانب سے جوہری ھتھیار تیار کرنے کے امکانات کے خطرے جنم لئے.

274**

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@