صہیونی جارحیت کا مقابلہ کرنے کیلئے آمادہ ہیں: شام

دمشق، 10 مئی، ارنا - اعلی شامی سفارتکار نے صہیونیوں کی فضائی جارحیت کے ردعمل میں اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ شامی حکومت اور مسلح افواج صہیونی حملے اور دراندازی کا جواب دینے کے لئے تیار ہیں.

یہ بات نائب شامی وزیر خارجہ 'فیصل مقداد' نے جعمرات کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے نمائندے کے ساتھ خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہی.
یہ گفتگو شام پر صہیونیوں کے میزائل حملے کے کچھ ہی گھنٹوں بعد ہوئی جس میں فیصل مقداد نے اس بات پر زور دیا کہ صہیونی جارحیت کا منہ توڑ جواب دیا جائے گا.
انہوں نے امریکی اور صہیونی حکمرانوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ امریکی محکمہ دفاع کو صہیونیوں کی جارحیت بھگتنا ہوگا کیونکہ امریکہ نے صہیونیوں کو مشرق وسطی میں کھلی چھوٹ دے رکھی ہے جس کی وجہ سے خطہ اور دنیا شدید بدامنی کا شکار ہوا ہے.
فیصل مقداد نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ شام کے خلاف صہیونی حملوں پر خاموش نہیں رہیں گے بلکہ ہم اپنی بھرپور تیاری سے ایسی جارحیت کا جواب دینے کے لئے آمادہ ہیں.
انہوں نے کہا کہ صہیونیوں کے خلاف ہماری مزاحمت جاری رہے گی. شام، فلسطینی قوم کے حامی اور صہیونیوں کی مخالفت کرتا ہے اسی لئے آج شام صہیونی جارحیت کا شکار ہے.
نائب شامی وزیر خارجہ نے خطے میں سعودی عرب کے کردار کو منفی قرار دیتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب اپنے آپ کو ایک مسلم ملک سمجھتا ہے جبکہ وہ آج کل اسرائیل کا دوست بنا پھرتا ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ آج سعودیہ کے اسرائیل سے تعلقات خلیج فارس کے دیگر ممالک سے زیادہ اچھے ہیں.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@