ایران جوہری معاہدے کی حمایت کرتے ہیں: کینیڈین وزیراعظم

تہران، 10 مئی، ارنا - کینیڈا کے وزیراعظم نے امریکہ کی ایران جوہری معاہدے سے علیحدگی پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ کینیڈا، ایران جوہری معاہدے کی حمایت کا سلسلہ جاری رکھے گا.

جسٹن ٹروڈو نے کہا ہے کہ ہم غیر ملکی پالیسیوں کے بارے میں فیصلہ کرنے والے انفرادی ممالک کی صلاحیتوں کا احترام کرتے ہیں اور کہا کہ ایران جوہری معاہدہ کامل نہیں تھا لیکن یہ جوہری ہتھیاروں کی روک تھام کے لئے مفید ہے.
انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی جانب سے اس بات کی کئی بار تصدیق کی گئی کہ ایران جوہری ہتھیار نہیں بنا رہا اور اس حوالے سے ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای نے فتوی بھی جاری کیا ہے.
اس موقع پر انہوں نے مزید کہا کہ جوہری معاہدے اور نیٹو کے حامیوں کے ساتھ کھڑا رہنے ہمارے لئے بہت اہم ہے.
یاد رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے گزشتہ بدھ کی رات ایک بار پھر ایران اور جوہری معاہدے کے خلاف پرانے الزامات کو دہرا کر اس معاہدے سے امریکہ کی علیحدگی کا اعلان کردیا.
ٹرمپ نے ایران کے خلاف پرانی ہرزہ سرائیوں کو دہراتے ہوئے کہا کہ وہ ایران پر دوبارہ پابندیاں لگانے کے حکم نامے پر دستخط کریں گے.
صدر اسلامی جمہوریہ ایران ڈاکٹر حسن روحانی نے بھی ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے جوہری معاہدے سے علیحدگی کے اعلان کے ردعمل میں کہا کہ آج سے یہ معاہدہ ایران اور اس پر دستخط کرنے والے 5 فریقین کے درمیان رہے گا.
انہوں نے ایرانی قوم کو اس بات کی یقین دہانی کرائی ہے کہ اگر موجودہ صورتحال میں ہمارے قومی مفادات کو تحفظ نہ ملے تو وہ ایک بار پھر قوم سے خطاب کرتے ہوئے ریاست اور حکومت کے تعمیری فیصلوں سے آگاہ کریں گے.
271*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@